ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

عالمی ادارہ صحت کے مطابق دنیا بھر میں بیماریوں اور معذوریوں کی ایک بڑی وجہ ڈپریشن ہے۔ دنیا بھر میں ہر تیسرا شخص، اور مجموعی طور پر 30 کروڑ سے زائد افراد اس مرض کا شکار ہیں۔  ڈاکٹروں کے مطابق ڈپریشن ایک عام بیماری ہے، ٹینشن دوسری بیماریوں کو جنم دیتی ہے، مردوں کے مقابلے میں خواتین زیادہ ڈپریشن کا شکار ہیں۔ مرد حضرات اپنا غصہ دوسرے پر نکال لیتے ہیں، جبکہ خواتین کے فرائض مردوں کے مقابلے میں کہیں زیادہ ہوتے ہیں، دیگر کاموں کے علاوہ گھریلو کام زیادہ ہوتے ہیں،جوکہ ڈپریشن میں اضافے کا باعث بنتے ہیں جبکہ دیہی علاقوں کی خواتین کے مقابلے میں شہری خواتین میں ڈپریشن اوسطاً زیادہ پایا جاتاہے۔ ہم بتایں گے کہ ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں وہ کون کون سی ہیں۔

جنیاتی طور پر کچھ انسانوں میں ڈپریشن میں مبتلا ہونے کے زیادہ امکانات ہوتے ہیں تاہم جنیات اس حوالے سے صرف 10 سے 15 فیصد ہی کردار ادا کر سکتے ہیں۔  ادویات لینے والے افراد صبر کا مظاہرہ کریں کیوں کہ اکثر چھ ہفتوں تک اس کے فوائد سامنے نہیں آتے۔

طبیب کے متعلق چند ضروری ہدایات

مریض کے متعلق چند ضروری ہدایات

وقت اور حالات کبھی ایک سے نہیں رہتے‘ غم‘ خوشی‘ تنگی‘ خوشحالی‘ بیماری اور صحت یہ سب زندگی کے اتار چڑھاؤ کا حصہ ہیں۔ ایک انسان کی زندگی میں حالات و واقعات کا یہ مدوجزر ایک فطری عمل کا حصہ ہے۔ اسی لیے خالق کائنات نے انسان کی ذہنی اور جسمانی تخلیق اس طور پر کی ہے کہ وہ ہردور میں اپنے جینے کا سامان پیدا کرلیتا ہے۔ درجِ زیل وہ بیماریاں ہیں جو ڈپریشن سے ہوتی ہیں:

  1. شوگر
  2. بلڈ پریشر

    کینسر Cancer اور اسکا علاج

    ONE DEVICE 100 TESTS

  3. معدہ میں تیزابیت و السر
  4. شدید تھکاوٹ chronic fatigue syndrome
  5. گنج پن
  6. دل کی بیماریاں
  7. دمہ
  8. موٹاپا
  9. سردرد
  10. الزایؑمر
  11. کمر درد
  12. ہارمون میں عدمِ توازن

وجوہات

معاشرے کے بڑھتے ہوۓ مسایؑل، شور، آلودگی، گندگی، کم آمدنی، گھریلو پریشانیاں، گھریلو جھگڑے، منفی انزاز فکر، مایوسی، ناامیدی، وہم، ڈر و خوف، غصہ، نیند میں بے سکونی، خوراک میں بےاعتدالی، زندگی میں بے اعتدالی، موٹاپا، کویؑ بیماری، ورزش سے اجتناب، محبت ہا کسی مقصد میں ناکامی، چھوٹی چھوٹی باتوں کو خود پر مسلط کر لینا، کسی عزیز کا انتقال، حادثہ، طلاق، موبایؑل فون کا بے تہاشا استعمال، احساسِ کمتری، تنہایؑ، ضرورت سے زیادہ ادویات، سکون یا نیند کی ادویات،

 

پھیپھڑوں کا کینسر Lung Cancer

خیروعافیت کی دعا

علامات

سستی، کاہلی، وزن میں کمی یا زیادتی، کام میں عدم دلچسپی، قوتِ فیصلہ کا فقدان، زندگی سے بیزاری، کچھ نہ کرنے کی عادت، زنگی میں یگانگت، الگ گھلگ رہنا، بلاوجہ جسمانی درد، جلد اور معدہ کے مسایؑل، سینے میں جلن، قبض، پیچش، قے، خودکشی کا خیال، اداسی وغیرہ۔

زہنی تناؤ سے نمٹنے کے طریقے

  • سبب کے حساب سے عمل کریں
  • ورزش، واک، جم، جاگنک
  • ہوگا، مراکبہ، عبادت
  • مالش، مساج
  • قدرتی طرززندگی
  • خوب آرام کریں
  • پھل اور سبزیاں کھایں
  • خود اعتمادی اور قوتِ برداشت
  • خوشیاں بانٹیں اور خوش ہوں
  • صبر و شکر
  • مثبت سماجی سرگرمیوں میں حصہ لیں
  • اپنا پسندیدہ کام کریں یا پسندیدہ کھانا کھایں۔
  • اپنے بچوں کو پارک میں لے جایں۔
  • دودھ ملے شہد کے ساتھ سیب کھایں
  • گھر میں روشنی کریں
  • پیچیدہ کاموں کو چھوٹے چھوٹے حصوں میں کریں
  • لوگوں کے لیے آسانیاں پیدا کریں
  • اچھی یادیں
  • مضبوط ارادہ کے لوگوں سے دوستی کرو
  • مسواک کریں سجدہ میں زیادہ دیر گزاریں

ایک واقعہ

میں ایک اخباری دنیا کے نہایت مشہور کالم نگار سے ان کی علاج معالجے کےسلسلے میں گفتگو کررہا تھا۔ انہوں نے بے ساختہ جیب سے نوٹ نکالا اور اس کو دانتوں کی طرف لے جانے لگے شاید کھانے کے بعد ان کے دانتوںمیں کوئی خوراک کا ذرہ اٹکا ہوا ہوگا‘ میں نے ان کا ہاتھ وہیں پکڑ لیا اور بہت پیار سے ان کے ہاتھ سے بیس روپےکانوٹ لے لیا اور ان کی جیب میں ڈال دیا اور میرے قریب ایک خلال ٹوتھ پک پڑا تھا وہ میں نے انہیں دے دیا کہ اس نوٹ کو طرح طرح کے ہاتھ اور طرح طرح کے ماحول سے گزرنا ہوتا ہے اور اس میں بہت طاقتور جراثیم ہوتےہیں۔ میری بات پر وہ صاحب چونک پڑے کہنے لگے اوہ! میں نےخیال ہی نہیںکیا‘ میرے سامنے کوئی کاغذ پڑا ہو‘ نوٹ ہو میں اسی سے گزارا کرلیتا ہوں۔ نامعلوم مجھےکیا سوجھی۔۔۔! میں نے ان کے تمام دانت چیک کیے حالانکہ میں ڈینٹل سرجن نہیں ہوں لیکن میں نے کچھ تھوڑی سی طب پڑھی ہے اور طب کی کتب تالیف کی ہیں تو میں نے ان سے کہا آپ کے دل کی بیماری کی بنیادی وجہ آپ کے صرف دانت ہیں‘ جن سے پیپ رس رس کر آپ کو دل کا اور معدے کامریض بنا دیا ہے۔ وہ میری طرف جن نگاہوں سے دیکھنے لگے وہ نگاہیں متنازعہ تھیں ان میں حیرت بھی تھی اور حقارت بھی۔۔۔ کیونکہ وہ اس سے پہلے اندرون بیرون ملک بڑے بڑےڈاکٹروں سے ملاقات کرچکے تھے۔میں ان کی آنکھوں سے حیرت اور حقارت کو بھانپ گیا۔ میں نے کہا ٹھیک ہے! آپ کو میری بات سمجھ نہیں آئی آپ کچھ عرصہ کیلئے میری صرف دو باتیں آزمالیں! اگر افاقہ ہوجائے تو ٹھیک ورنہ آپ کی حیرت تو بے جا نہ ہوگی لیکن حقارت بُری ہوگی۔
کہنے لگے! کیا بات؟ انہیں یہی دو چیزیں ہرکھانے کے بعد خلال اور سوتے وقت چند قطرے زیتون کے تیل کے منہ میں ڈال کر زبان سے اس سے مل لیں اور سوجائیں جن لوگوں نے یہ ٹوٹکہ کیا ان کے اور خود میرے اپنے مشاہدات بہت وسیع ہیں کہ یہ دانتوں کا خلال اورز یتون کے تیل کے چند قطرے مندرجہ ذیل بیماریوں سے بچاتے ہیں اگر کسی کو شک ہے تو میری تحریر پڑھنے کے بعد کچھ عرصہ کرے ضرور۔۔۔ کچھ عرصہ اگر نہ کیا تو پھر اس کا شکوہ بے جا ہوگا۔

مسوڑھے اور دانتوں کی کمزوری‘ خون آنا‘ یا منہ سے بدبو آنا۔ 2۔ نظر اور یادداشت اور بے اثر اور اس کی کمزوری۔ 3۔ دل کی بیماریاں اور خاص طور پر ہائی بلڈپریشر اور دل کی تھیلی میں پانی کا بھرجانا۔ 4۔ ٹینشن اور ذہنی کھچاؤ۔ 5۔معدے کے وہ امراض جس میں انسان وقتی طور پر معدے کے سیرپ‘ گولیاں یا پاؤڈر کھا کھا کر عاجز آچکا ہوتا ہے۔ 6۔ جگر کی بیماریاں اور وہ بھی ایسی خطرناک جس میں عام انسانی عقل سمجھ ساتھ چھوڑ جائے۔ یہ چند بیماریاں ہیں ایسی جو صرف خلال اور زیتون کے چند قطروں سے ایسے جاتی ہیں کہ شاید تھیں ہی نہیں اور بڑی بات یہ ہے کہ خود آتی ہی نہیں‘ ان بیماریوں میں آپ اگر تھوڑی سی توجہ کرلیں کہ آپ اگر چاہتے ہیں کہ یہ بیماریاں سوفیصد چلی جائیں تو پھر یہ دو عمل آپ ضرور کیجئے کیونکہ میرے پاس خلال اور زیتون کے بہت واقعات ہیں کتنے واقعات سناؤں یقین والے کیلئے ایک بات کافی ہے‘ بے یقین کیلئے سو دلیلیں بھی ناکافی ہیں۔ (بشکریہ عبقری فروری 2015)

صرف عورتوں میں ہونے والے کینسرز

دیگر ٹیکنالوجیز اور ڈوایؑسز

ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

sleep, stress, and daily activity monitor

ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

iRelax_Personal_Stress_Management

ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

Stress-Eraser-Portable-Biofeedback-Device

ایسی بیماریاں جو صرف ٹینشن سے ہوتی ہیں

Stress Test System (HAST Chamber)



Comments are Closed