جدید تحقیق

بقراط کا قول ھے کہ تمھاری دوا صرف اور صرف خوراک میں ھی ھے

new research in food جدید تحقیق

new research in food

  • ایک تازہ ترین اور جدید تحقیق کے مطابق ڈپریشن اور موڈ میں تبدیلی کی وجہ وٹامن بی، ڈی، زنک، فولیک ایسڈ، آیوڈین، امایؑنوایسڈ، اومیگا-3، ایؑرن، فولیٹ میں سے کسی چیز کی کمی ھو سکتی ھے جبکہ جنک فوڈ یا پراسس فوڈ کا بےجا استعمال بھی اسکی وجہ بن سکتا ھے۔ ایسی بیماریاں جو صرف ڈپریشن سے ہوتی ہیں جانیے

  • وٹامن ای کا استعمال بھت ساری بیماریوں سے بچاتا ھے۔ خاص طور پر کولیسٹرول کو کم کرنے کے لیے بھت اچھا سمجھا جاتا ھے۔ روزانہ مقدار سے زیادہ کھانے والے بھی کافی اچھا محسوس کرتے ھیں۔

  • وٹامن کے بلڈ کلوٹنگ میں اچھا سمجھا جاتا ھے اور اسکی کمی کولھے کے فریکچر میں اضافہ کا باعث بن سکتی ھے۔

  • نؑی تحقیق کے مطابق کولون، پراسٹیٹ اور بریسٹ کینسر کا خطرہ ان لوگوں کو زیادہ ھوتا ھے جھاں سورج کی شعاعیں بھت کم پھنچتی ھیں۔ چونکہ کینسر کے خلیؑے تقسیم ھوتے ھیں۔ لھزا ایک اندازے کے مطابق وٹامن ڈی متواتر کھانے والوں میں کینسر کے خطرات کم ھوتے ھیں۔

  • ایک تازہ تحقیق کے مطابق وٹامن بی6، بی12 اور فولیٹ کی مناسب مقدار لیتے رھنے سے دل کی بیماریاں کم ھوتی ھیں۔ جبکہ ایک دوسری تحقیق کے مطابق ابھی فایؑنل فیصلہ نھیں ھوا۔

  • ایک عجیب تحقیق کے مطابق مصنوعی فولیٹ قدرتی سے زیادہ بھتر ھے۔

  • عام طور پر یہ سمجھا جاتا ھے کہ کٹھی اشیاء نزلہ زکام کا باعث ھے جبکہ کچھ تحقیقی مواد یہ کھتا ھے کہ وٹامن سی زکام کا دورانیہ اور پیچیدگی کم کرتا ھے۔

  • 2008 کی ایک تحقیق کے مطابق کھجور میں 12 معدنیات (سیلینیم، کاپر، پوٹاشیم، میگنیشیم، بورون، کیلشیم، کوبالٹ، فلورایؑڈ، آیؑرن، فاسفورس، سوڈیم، زنک) 23 اقسام کے امایؑنوایسڈ (جو کسی اور پھل میں بھت کم ملتے ھیں) کیروٹینایؑڈ، انٹی اکسی ڈنٹ اور فینولکس شامل ھیں۔ اس کے علاوہ کھجور میں نیاسن، پروٹین، کاربوھاڈریٹس اور 0٪ چکنایؑ شامل ھیں۔

  • مستقبل میں لوگ بیکٹیریا اور وایؑرس سے اتنے نھیں مریں گیں جتنے نان کمیونیکیبل ڈیزز(non communicable diseases) سے مریں گیں۔

جتنے نان کمیونیکیبل ڈیزز(non communicable diseases جدید تحقیق

  • ایک تازہ ترین تحقیق کے مطابق اومیگا-3 دماغی استطاعت میں اضافہ کرتا ھے۔

شادی آخر کب کرنی چایۓ جاننے کے لیے یہاں کلک کریں

  • وٹامن اے ھڈیوں کی نشونما میں معاون ھے ھی مگر بھت زیادہ مقدار ھڈیوں کے بھربھرے پن کا باعث بنتی ھے۔

  • اومیگا-3 پر ھونی والی تحقیق کے مطابق یہ دل، نظام دوران خون، مرکزی عصبی نظام، آنکھوں اور انفیکشن میں مثبت کردار ادا کرتا ھے۔

  • وٹامن سی کے زیادہ استعمال سےڈپریشن ھارمون بھت کم ھو جاتا ھے۔

  • اب تو نیؑ تحقیق بھی مان گیؑ ھے کہ سونف کالک (colic) میں مفید ھے۔

  • جو خواتین پیاز کا زیادہ استعمال کرتی ھیں ان میں اوری کے کینسر کا خطرہ 40٪ تک کم ھو جاتا ھے۔

  • زیادہ تر الرجی کی اقسام خود ھی 2 ھفتوں میں ختم ھو جاتی ھیں۔ اور اگر اسکو تنگ کرنے والے فیکٹرز سے بچا جاۓ تو آرام آجاتا ھے۔ اسپرین، گرم و تیزغزا، الکوحل، مصالحہ جات وغیرہ سے اجتناب کریں۔ (ASCIA 2015)

  •  جدید سایؑنس میں ارٹیکیریا کا علاج نھیں ھے جبکہ ایورویدہ میں اسکا علاج ھے۔

  • ٹماٹر، سٹرابیری، پریزرویٹوز اور خوراک کو رنگنے والے کیمیکلز وغیرہ ھسٹامایؑن کے اخراج کا باعث بنتے ھیں۔
  • وٹامن ڈی جسم کی اندرونی سوزش کو کم کرتا ھے۔

  • خشک انجیر میں دیگر پھلوں سے زیادہ انٹی اکسیڈنت خصوصیات پایؑ جاتی ہیں۔

  • یونیسکو کے مطابق کیا آپکو معلوم ہے کہ غزایؑت کی کمی، خون کی کمی، آنکھوں کی کمزوری، تھکان اور اعصابی کمزوری کا شکار ہونا کھانوں کی غزایؑت اور ترتیب سے ناوقفیت کی وجہ سے ہے۔

  • جسم کی نشونما اور ٹوٹے ہوۓ خلیوں کی نشونما والی غزایں: مچھلی، مرغی، انڈے، شہد، دودھ اور مٹر۔ جسم کو طاقت و توانایؑ دینے والی غزایں: تیل، چاول، ڈبل روٹی، پنیر، کیلے، آلو، مکؑی۔ خون پیدا کرنے والی غزایں: کھیرا، آم، پھول گوبھی، مالٹا، پیاز، مٹر، گاجر، شلجم، ٹماٹر، کلیجی، گوشت، سبز پتوں والی سبزیاں۔ (علاج باالغزا UNESCO)