مفید ٹوٹکے

بجاۓ ڈاکٹروں کو ہزاروں لاکھوں دیۓ جایں آپ سے گزارش ہے کہ ایک دفعہ ان ٹوٹکوں کو آزما کر دیکھیں اور اپنی قیمتی آراء سے نوازیں۔

1- دل

  • ارجن کی خشک چھال 2 چمچ کو 2 کپ پانی میں ابال لیں جب آدھا کپ پانی رہ جاےؑ تو پی لیں۔ دل اور کولیسٹرول کے لیے اکسیر ھے دنوں میں فاؑیدہ ھوتا ھے۔
  • کولیسڑول اور سگریٹ کی وجہ سے خون گاڑھا ھوجاتا ھے ایسے میں تھوڑی دیر کے لیے اسپرین استمعال کریں۔ نیز اومیگا-3 کا استعمال کریں۔
  • 10 قطرے کلونجی کا تیل اور 1 چمج شھد ملا کر رات سوتے وقت 20 دن تک استعمال کریں کولیسٹرول کم کرتا ھے۔

ہمارے معاشرے میں جنسی تعلیم کتنی ضروری ہے جاننے کے لیے یہاں کلک کریں

2- قبض

  • صبح نھار منہ ایک گلاس نیم گرم پانی پینے سے قبض رفا ھوتی ھے۔
  • بعض لوگوں کو روغن بادام اور بعض کو کیسٹر کا تیل سوتے وقت 1 چاےؑ کا چمچ دودھ کے ساتھ دیں۔
  • بعض لوگوں کی مولی کھانے سے انتڑیوں کی حرکت تیز ھونے سے قبض دور ھوجاتی ھے۔ نیز یہ اعصاب کو مضبوط کرتی ہے۔
  • 2-3 میٹھے آموں کا رس رات کو دودھ کے ساتھ لیں۔
  • انجیر کھانے سے قبض کھانسی دمہ دور، بدن موٹا اور رنگت نکھرتی ھے۔
  • خشکی والے مریضوں کو 5-10 تولہ دیسی گھی نھار منہ پینا چاھیے۔
  • بنفشہ کے پھول 6 ماشہ رات کو دودھ کے ساتھ لیں۔
  • رات سوتے وقت اطریفل 9 گرام کیسٹر آیؑل 1 چمچ کے ساتھ لیں۔

مزید تفصیل کے لیے ہیاں کلک کریں

3- معدہ

  • اجواین 2 چمچ، چھوٹی ھرڑ 2 عدد، ھینگ آدھی چٹکی، سوندھا نمک ذایقے کے مطابق لے کر سب کو پیس لیں۔ کھانے کے بعد 1 چمچ گرم پانی کے ساتھ لیں۔
  • جوارش کمونی یا جوارش جالینوس 5-6 گرام (1 چاےؑ والی چمچ) 2 بار کھانے کے بعد لیں۔
  • معدہ کی خراش کے لیے ھلدی اور ملٹھی کا پوڈرھموزن مکس کر کے صبح شام 2 گرام ھمراہ شھد لیں۔
  • پرھیزوغزا: ابلے چاول اور کچھڑی مونگ کی دال چھلکوں والی دیں۔ تلی، کٹھی، چاےؑ، کافی، بھنڈی، کریلے نہ کھایؑں۔ بلڈ پریشر زیادہ نہ ھو تو کھانے میں اجوایؑن اور سیاہ نمک دیں۔ مڑ، گوبھی، آلو، اروی، کچالو، دال ماش کم کھایں۔ السر والےچھوٹے چھوٹے کھانے لیں۔ سبز پتوں والی سبزیاں اور انکا سوپ اور کدو بیج کھایؑں۔ دودھ صرف موافق ھو تو لیں یا صرف گاےؑ کا دودھ پیںؑ۔ قبض کے لیے اسپغول لیں۔ مناسب فایؑبر، وٹامن کے، مناسب ادرک کی چاےؑ پیںؑ۔ نوٹ کریں کہ السر میں دودھ کا استعمال الٹا تیزابیت بڑھاتا ھے۔ اچار، چٹنی، اسپرین نا لیں۔ ساگ، سفید چنے کم کھایؑں۔ مرچیں کم کرکے زیتون کا تیل سالن کے اوپر ڈال کر کھایںؑ۔ مھینہ میں 3 روزے رکھیں۔
  • 1تولہ سفید زیرہ، 1تولہ پودینہ، 1تولہ ادرک اور 3 تولہ گل قاصدی کی چاےؑ بنا کر پیںؑ۔
  • ریاح اور گیس کے لیے دیسی اجوایؑن 60 گرام میں مرحبا روغن کلونجی 10 قطرے ملا کر لیموں کے رس میں ڈبو دیں۔ بعد ازاں دھوپ میں رکھ کر خشک کریں اور اس میں 10 گرام کالا نمک پیس ڈالیں۔ مقدار خوراک: 1-2 گرام صبح شام۔

مزید تفصیل سے جاننے کے لیے ہیاں کلک کریں

4- جوڑوں کا درد

  • ھڈیوں کی سب بیماریوں سے بچنے کے لیے کیلشیم اور وٹامن ڈی ضروری ھے۔ کیونکہ ھڈیوں کی بیماریوں کی وجوھات میں کیلشیم، وٹامن ڈی کی کمی، موروثی، دیگر بیماریوں کع وجوھات، حادثہ یا ھڈیوں کی ٹوٹ پھوٹ شامل ھیں۔
  • صبح کے وقت دار چینی کا قھوہ جوڑوں کے درد میں مفید ھے۔
  • یورک ایسڈ کی زیادتی کی وجہ سے اگر جوڑوں میں درد ھو تو صبح نھار منہ سیب کا سرکہ 1 چمچ 1 گلاس پانی میں ڈال کر لیں۔
  • 3-4 دن تک روزانہ میٹھا سوڈا خالی پیٹ لیں۔

جوڑوں کے درد کے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

5- ارٹی کیریا Urticaria

پوری دنیا میں ارٹیکیریا کے تقریباؑ 1٪ مریض ھیں۔ ارٹی کیریا Urticaria کو اردو میں چھپاکی یا پتی اچھلنا بھی کھتے ھیں۔ یہ ایک قسم کی الرجی ھے اور نوٹ کر لیں جیسے بھت ساری اقسام کا علاج تو کیا اسباب تک دریافت نھیں ھوۓ ان میں ارٹی کیریا بھی شامل ھے۔ یہ شروع ٹھیک ھو جاۓ تو ٹھیک ورنہ خود ھی ٹھیک ھوتی ھے دوسرا یہ کہ اسکے ھونے کے بھت سارے اسباب ھیں تو ایک ٹوتکہ یہ ھے کہ اسباب ڈھونڈ کر علاج کیا جاۓ۔ مسؑلہ یہ ھے کہ اسباب ملتا ھی نھیں ھے۔  اسکو انگریزی میں Chronic Idiopathic Urticaria (CIU) or Chronic Spontaneous Urticaria (CSU) بھی کھتے ھیں۔

مزید اسکے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

6- جنسی مسایؑل مردانہ

قدیم اطباء کا یقین ھے کہ جنسی قوت ھی انسان کے صحت مند اور توانا ھونے کی دلیل ھے۔ جبکہ ایسا نھیں ھے۔ ایسے بھت سارے افراد ھیں جن میں جنسی قوت یا تو ختم ھو جاتی ھے یا پھر مختلف امراض کی وجہ سے بھت کمزور ھوجاتی ھے۔ وہ بھی بھت اچھی زندگی گزار رھے ھوتے ھیں۔ اسکی سب سے بڑی مثال ھجڑوں کی ھے۔ ان میں جنسی قوت ویسی نھیں ھوتی جیسی کہ ایک طاقتور مرد میں ھوتی ھے پھر بھی یہ نہ صرف صحت مند بلکہ توانا بھی ھوتے ھیں۔ ھاں یہ اور بات ھے کہ اولاد پیدا کرنے کے لیے کرم (Sperms) کا نہ ھونا یا کمزور ھونا اس بات کی دلالت کرتا ھے کہ مرد نمرد ھے مگر وہ طاقتور مرد ھو سکتا ھے۔ جنسی مسایؑل (مردانہ و زنانہ) میں مختلف کیفیات دیکھی جاتی ھیں۔ جنکہ تفصیل درج زیل ھے۔

مختلف جنسی امراض کے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

7- شوگر Diabetes اور اسکا علاج

شوگر کو ڈاکٹر لاعلاج مرض گردانتے ہیں جبکہ اللہ اور رسول ﷺ کے فرمودات کے مطابق ہر بیماری کی شفا موجود ہے۔ بس ہمارے علم میں ابھی تک نہیں آسکی۔ ڈایابیٹیز ایسوسی ایشن آف پاکستان کی ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان میں اس وقت 70 لاکھ کے قریب شوگر کے مریض ہیں جن میں 16 لاکھ بچے ہیں جبکہ حاملہ مریضوں کا تناسب سب سے زیادہ پاکستان میں ہے۔ اس طرح پاکستان کا نمبر پوری دنیا میں پھیلاؤ کے اعتبار سے ساتواں بنتا ہے۔ جی سی یونیورسٹی فیصل آباد کے وی سی کے مطابق 2025 تک کل شوگر کے مریض 1 کروڑ 15 لاکھ کے قریب ہو جایں گے۔ اس طرح یہ چوتھے نمبر پر آ جاۓ گا۔ شوگر کی موزی بیماری آگے بھت ساری بیماریوں کو جنم دیتی ھے جن میں آنکھ، گردے، دل اور پاؤں کی پچیدگیاں شامل ھیں۔ شوگر Diabetes اور اسکا علاج پیش کرنے سے قبل ھم اسکی وجوھات اور علامات پر بحث کریں گے۔ شوگر کو تین طرح کنٹرول کیا جاتا ہے صحت مند خوراک، جسمانی کام اور ادویات۔ اگر آپ بلڈ شوگر کو کنٹرول رکھتے ہیں تو شوگر اپکا کچھ نہیں بگاڑ سکتی۔ شوگر میں زیادہ تر خوراک کا پرہیز ہی بتایا جاتا ہے اور اپنا لایؑف سٹایؑل بدلا جاتا ہے۔ ادویات کے ضرورت کم پڑتی ہے۔

شوگر کے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

8- موٹاپا Weight Loss

موٹے لوگ پتلے ھونا چاھتے ھیں جبکہ بھت پتلے لوگ موٹا ھونا چاھتے ھیں۔ ایسا موٹاپا جو اٹھنے بییٹھنے اور کام کاج سے محسوس ھی نا ھو اسکو موتاپا نھیں کھتے۔ ھم پاکستانی یورپین سے زیادہ چینی اور چکنایؑ کھاتے ھیں۔ یہ تو اللھہ کا شکر ھے کہ لوڈشیڈنگ کی وجہ سے عام لوگ فٹ اور سمارٹ رھتے ھیں۔ جبکہ امیر لوگ اگر اپنا خیال رکھیں تو زیادہ جی لیتے ھیں نھیں تو غریب سے جلد مر جاتے ھیں۔ موٹاپا Weight Loss اور اسکا علاج بھت ھوصلے سے کرنا چاھے۔

موٹاپا کے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

9- جگر Liver

جگر ہمارے جسم کا سب سے بڑا اندرونی عضو اور غدود ہے جس کا وزن 1 سے ڈیڑھ کلو گرام تک ہوتا ہے- بیرونی سب سے بڑا عضو جلد ھے۔ اسکے پانچ شگاف یا حصے ھوتے ھیں۔ ایک شگاف کے اندر پتہ کی نالی ھوتی ھے اور جگر صفراء پیدا کر کے پتہ میں جمع کرتا رھتا ھے۔24  گھنٹوں کے دوران آدھا کلو سے 1 کلو تک پت یا صفراء بنتا ھے اور ھر وقت بنتا رھتا ھے۔ دوسرا شگاف لبلبہ سے جڑا ھوتا ھے۔ بعض جانوروں میں جگر چربی بھی جمع کرتا ھے جوکہ ھاؑبرنیٹ کو وقت کام آتی ھے۔ جگر ہمارے جسم میں دائیں جانب پیٹ کے اوپر اور پسلیوں کے پیچھے ہوتا ہے – جگر وہ تمام غذاجو ہم کھاتے ہیں اسے توانائی میں تبدیل کردیتا ہے جبکہ یہ توانائی ہمارے جسم کے لیے بہت ضروری ہوتی ہے ورنہ تھکاوٹ ھو جاۓ گی۔ پوری طرح اعضا کو نہ پہنچنے کی وجہ سے بدن کی حالت نہایت خراب ہوجاتی ہے جگر ایک نازک عضو ہے جو نہ زیادہ سردی برداشت کرتا ہے اور نہ زیادہ گرمی ۔  کیونکہ یہ خود بدن کی حرارت کنٹرول کر رھا ھوتا ھے۔  بدھضمی اور بے احتیاطی سے جگر کی حرارت بڑھ جاتی ہے۔

جگر کی جملہ بیماریوں اور انکے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

10- بال Hair

گرتے بالوں کی ٹینشن لینے سے بال اور زیادہ گرتے ہیں۔ بال مردہ خلیۓ ھوتے ھیں۔اوسط سر کے بال 1 لاکھ تک ھوتے ھیں جبکہ پورے جسم میں 50 لاکھ تک بال ھو سکتے ھیں۔ بالوں کو خوبصورت اور چمکدار بنانے کے بھت سارے ٹوٹکے ھیں۔ قدرتی بال Hair سفید ھوتے ھیں انکو ایک خاص مادہ سیاہ رکھتا ھے۔ گنج پن (hair loss) کا پوری دنیا میں کویؑ بھی علاج نھیں ھے کیونکہ جس خانے سے بال گر گیا تو اب اس جگہ سے بال اگنے کا امکان ختم ھو گیا۔ البتہ کمزور یا گرتے بالوں کو بچایا جا سکتا ھے۔ بالوں کے گرنے یا گنج پن کی ایک سے زیادہ وجہ ھو سکتی ھے۔ چند وجوھات درج ذیل تصویرمیں ھیں۔

بالوں کے جملہ امراج اور انکے علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

11- بواسیر Piles

حدیث1: “اس میں کویؑ شبہ نھیں انجیرکوکھاؤ کہ یہ بواسیر کو کاٹ کر پھینک دیتی ھے اور نقرس (درد) میں فایؑدہ دیتی ھے” حدیث2: “تمھارے لیے زیتون کا تیل موجود ھے اسے کھاؤ اور لگاؤکیونکہ بواسیر میں فایؑدہ دیتا ھے”۔ دیم اطباء اس بات پر متفق ھیں کہ بواسیر Piles کا شافی علاج نھیں ھے بجاےؑ اسکو کٹوادیا جاےؑ مگر اس بات کی کیا ضمانت ھے کہ دوبارہ نہ ھو۔ بواسیر کی 12 اقسام ھیں جبکہ علاج ایک سا ھی ھے۔ شروع میں احتیاط اور مناسب علاج سے فایؑدہ یقینی ھے۔

اسکی آٹھ اقسام مشہور ہیں جنکی تفصیل اور علاج کے لیے ہیاں کلک کریں

12- کینسر

ہر سال 4 فروری کو کینسر کا عالمی دن اور 10 فروری بچوں کا عالمی دن منایا جاتا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق دنیا میں ہر سال 70 لاکھ سے زائد ا فراد اس موذی مرض میں مبتلا ہو کر جان کی بازی ہار جاتے ہیں جبکہ پاکستان میں یہ تعداد 1 لاکھ کے قریب ہے۔ کینسر اس لیے زیادہ مھلک ھے کہ اسکی علامات واجبی سی ھوتی ھیں۔ عموماؑ 10-20 سال میں بڑھتا رھتا ھے اور آخر میں پتا چلتا ھے جب علاج کا فایؑدہ نھیں رھتا۔ اگر ابتدا میں ھی پتا چل جاےؑ تو 87٪ علاج ممکن ھے۔ عموماؑ 50-60 سال کی عمر میں زیادہ ھوتا ھے۔ اگر ابتدا میں ھی پتا چل جاےؑ تو 87٪ علاج ممکن ھے۔ عموماؑ 50-60 سال کی عمر میں زیادہ ھوتا ھے۔ دنیا میں بھت سارے کینسر Cancer اور اسکا علاج مروجہ ھیں- صحت کی عالمی تنظیم کی ایک رپورٹ کے مطابق 2005 ء سے لیکر 2015ء کے آخر تک سات سے آٹھ کروڑ افراد کینسر کی وجہ مر گۓ۔

کینسر کی 200 سے زایؑد اقسام ہیں چند کی تفصیل دیکھیں

13- عورتوں کی بیماریاں

درجِ زیل میں عورتوں کے بیماریوں Women Sexual Diseases خاص طور پر جنسی مسایؑل کی تفصیل اور انکا حل بیان کیا گیا ہے۔

  1. لیکوریا
  2. پستان کا چھوٹا بڑا ہونا
  3. حمل کے امراض
  4. اسقاطِ حمل (ضبطِ اولاد)
  5. درد کے بغیر بچہ کی پیدایؑش
  6. حیض کے امراض
  7. رحم کی خارش و ورم
  8. اختناق الرحم (ہسٹیریا)
  9. شرمگاہ کی خارش
  10. بانجھ پن
  11. پڑھاپا اور جنسی زندگی
  12. اٹھرہ
  13. آرگیزم
  14. ہم جنس پرستی
  15. بلوغت کے ہارمون
  16. شادی کے مسایؑل
  17. ورزشیں جو جنسی قوت کو بڑھاتی ہیں

مزید تفصیل دیکھیں

یہ نظم آج سے 35 سال قبل حکیم سعید صاحب نے کہی تھی

جہاں تک کام چلتا ہو غذا سے
وہاں تک چاہیے بچنا دوا سے

اگر خوں کم بنے، بلغم زیادہ
تو کھا گاجر، چنے ، شلغم زیادہ

جگر کے بل پہ ہے انسان جیتا
اگر ضعف جگر ہے کھا پپیتا

جگر میں ہو اگر گرمی کا احساس
مربّہ آملہ کھا یا انناس

اگر ہوتی ہے معدہ میں گرانی
تو پی لی سونف یا ادرک کا پانی

تھکن سے ہوں اگر عضلات ڈھیلے
تو فوراََ دودھ گرما گرم پی لے

جو دکھتا ہو گلا نزلے کے مارے
تو کر نمکین پانی کے غرارے

اگر ہو درد سے دانتوں کے بے کل
تو انگلی سے مسوڑوں پر نمک مَل

جو طاقت میں کمی ہوتی ہو محسوس
تو مصری کی ڈلی ملتان کی چوس

شفا چاہیے اگر کھانسی سے جلدی
تو پی لے دودھ میں تھوڑی سی ہلدی

اگر کانوں میں تکلیف ہووے
تو سرسوں کا تیل پھائے سے نچوڑے

اگر آنکھوں میں پڑ جاتے ہوں جالے
تو دکھنی مرچ گھی کے ساتھ کھا لے

تپ دق سے اگر چاہیے رہائی
بدل پانی کے گّنا چوس بھائی

دمہ میں یہ غذا بے شک ہے اچھی
کھٹائی چھوڑ کھا دریا کی مچھلی

اگر تجھ کو لگے جاڑے میں سردی
تو استعمال کر انڈے کی زردی

جو بد ہضمی میں تو چاہے افاقہ
تو دو اِک وقت کا کر لے تو فاقہ

ایسی بیماریاں جو صرف ڈپریشن سے ہوتی ہیں جانیے


 

دیگر عام ٹوٹکے

  1. جن لوگوں کو روزے میں چہرے اور ھونٹ پر شدید خشکی ہو جاۓ تو سحری میں دھی کا استعمال کریں۔
  2. دھی کیلشیم، پوٹاشیم، انٹی آکسیڈنٹ، فولاد سے بھرپور ھے۔ یہ ہڈیوں، تیزابیت، قوتِ مدافعت، خون کی کمی، جسمانی کمزوری اور بلڈ پریشر میں مفید ھے۔
  3. نہار منہ کھجور کھانے سے پیٹ کے کیڑے مر جاتے ھیں۔
  4. حاملہ عورت کے لیے کھجور بہترین غزا ھے۔
  5. دمہ، دل، گردہ، مثانہ، پتہ، آنتوں کے امراض میں کھجور مفید ھے۔ یہ بلغم خارج کرتی، منہ کی خشکی دور کرتی اور پیشاب آور ھے۔
  6. کھجور کو دودھ میں ابال کر کھانا بہترین غزا ھے۔
  7. کھجور کی جڑ کا پتوں کی راکھ سے منجن کرنا بہت مفید ھے۔
  8. کھجور کو رات پانی میں بھگو کر صبح اسکا پانی اگر پیا جاۓ تو یہ جگر کی اصلاح کرتا ھے۔
  9. تخمِ کھیرا: پیٹ کے کیڑوں کو مارنے یا خارج کرنے کے لیے مفید ھے۔
  10. گھیکوار کا گودا صبح شام منہ پر لگانے سے چہرے کے داغ دھبے آہستہ آہستہ دور ہو جاتے ہیں۔
  11. پیشاب کی جلن دور کرنے کے لیے پانی زیادہ استعمال کیجیے
  12. زیادہ پیاس لگے، تو ککڑیاں کھائیے۔ پیاس کسی صورت نہ بجھے، تو دودھ کی کچی لسی بنا کر دو تین گلاس پئیں، پیاس ختم ہو جائے گی۔
  13. پائوں کے تلوے جلتے ہوں، تو صبح شام گھیکوار کے گودے سے تلوئوں کی مالش کریں۔
  14. دل کی تیزدھڑکن اور پیٹ میں گیس بننے سے روکنے کی خاطر سونف اور خشک دھنیا ایک ایک چھٹانک صاف کر کے پیس لیں۔ اس آمیزے میں ڈیڑھ چھٹانک شکر ملائیں۔ صبح شام ایک ایک چمچ لیں۔
  15. نظر بہتر بنانے کے لیے سات بادام پیس کر آدھا آدھا چمچ سونف و مصری کے ساتھ روزانہ لیں۔
  16. گرمیوں میں آنکھ کی سرخی اور جلن دور کرنے کے لیے پانچ یا سات آملے مٹی کے پیالے میں رات کو بھگو دیں۔ صبح پانی چھان کر اس سے آنکھوں پر چھینٹے ماریں۔
  17. بچوں میں پیٹ کے کیڑوں سے نجات کے لیے کمیلہ کا ۳؍گرام سفوف صبح شام دیں۔
  18. پائوں کی ایڑیاں پھٹنے اور جلن سے بچانے کے لیے ایک تولہ کچا سہاگا، ایک تولہ پھٹکری، ایک تولہ گندھک لے کر پیس لیں۔ اس میں پٹرولیم جیلی ملا کر رات کو سوتے وقت ایڑیوں پر لگائیں۔ چند دنوں میں افاقہ ہو جائے گا۔
  19. موٹاپا کم کرنے کے لیے پسی کلونجی آدھا چمچ ایک پانی میں ابال کر صبح نہار منہ اور شام کو لیں۔ ایک گلاس پانی میں کلونجی تیل کے چار پانچ قطرے اور ایک لیموں کا رس ڈال کر صبح شام متواتر ایک ماہ استعمال کرنے سے موٹاپا کم جا سکتا ہے۔
  20. زکام کے خاتمے کے لیے تھوڑی سی چینی دہکتے ہوئے کوئلوں پر ڈال کر اس کا دھواں سونگھیں۔
  21. ہرے دھنیے کا پانی نکال کر سونگھنے سے چھینکوں کو کنٹرول کیا جا سکتا ہے۔
  22. نکسیر کا خون بند کرنے کے لیے بھی ہرے دھنیے کا پانی نکال کر سونگھیں۔
  23. ناک کی بدبو دور کرنے کے لیے چٹکی بھر پھٹکری تھوڑے سے پانی میں حل کر کے ناک میں ڈالیں۔
  24. چھوٹے بچوں میں پیشاب کی جلن دور کرنے کے لیے پانی میں پیاز کچل کر ۶۰گرام چینی ملا لیں۔ صبح شام دو سے تین چمچ یہ آمیزہ پلائیں۔
  25. بدہضمی اور الٹیاں روکنے کے لیے ۳۰گرام پیاز، پودینہ کے چند پتے اور سات عدد کالی مرچ اچھی طرح ملا کرکھائیے۔
  26. صبح شام سلاد کے طور پر پیاز کا استعمال بدہضمی روکتا اور جسمانی طاقت بڑھاتا ہے۔
  27. بھوک بڑھانے کی خاطر پھلوں کے سرکے میں پیاز اور ادرک کاٹ کر ملائیے۔ پھر پودینے کے پتے، لہسن کے دوچار ٹکڑے اور تھوڑی سی کشمش ملا کر کھانے میں بطور سلاد استعمال کریں۔
  28. سر کے زخم اور خارش دور کرنے کے لیے نیم کی نمولیاں پیس، پانی میں ملا، گاڑھا لیپ بنا کر رات کو بالوں میں اچھی طرح لگائیں۔
  29. سردیوں میں ہاتھ پائوں کی انگلیوں میں سوجن دور کرنے کے لیے گھیا (لوکی) کدوکش کر اسے ہاتھ پائوں پر اچھی طرح ملیں۔ ایک گھنٹے بعد ہاتھ پائوں دھولیں اور پھر پٹرولیم جیلی لگائیں۔
  30. کھانسی روکنے کے لیے صبح، دوپہر شام ملٹھی منہ میں رکھ کر چوسیں۔
  31. آنکھوں کی جلن دور کرنے کے لیے ٹھنڈے پانی کے چھینٹے ماریں اور برف سے ٹکور کریں۔
  32. زخم کی سوجن دور کرنے کے لیے پیاز جلا اس میں ہلدی ملا کر لیپ بنائیے۔ اسے پھر زخم پر لگائیں۔
  33. دائمی قبض دور کرنے کے لیے صبح شام زیتون کا تیل معتدل مقدار میں استعمال کریں۔
  34. پیٹ کے جملہ امراض روکنے کے لیے اسپغول کا چھلکا بلاناغہ استعمال کریں۔
  35. ہچکی روکنے کے لیے دیسی گھی میں سوجی کا حلوہ بنا کر کھائیے۔ یا منہ میں برف کی ڈلی رکھیں یا آہستہ آہستہ گنڈیریاں چوسیں۔
  36. بچوں کو بخار زیادہ ہو جائے، تو فوراً نہلا دیں یا ٹھنڈے پانی کی پٹیاں کریں۔
  37. دست اور قے روکنے کے لیے سونف اور پودینہ کا قہوہ بنا کر پیجیے۔
  38. پائوں نرم و ملائم کرنے کے لیے سونے سے دس منٹ پہلے پائوں تازہ پانی میں بھگوئیے۔ اس پانی میں چند قطرے روغن زیتون اور تھوڑا سا نمک ملا لیں۔ خشک کر کے پٹرولیم جیلی یا سرسوں کا تیل لگائیں۔سردیوں میں نیم گرم پانی استعال کریں۔
  39. کولیسٹرول کم کرنے کے لیے ایک ایک چمچ آملہ اور مصری ملا کر روزانہ صبح نہار منہ ایک گلاس پانی کے ساتھ لیں۔
  40. زہریلا کیڑا کاٹ لینے کی صورت میں لہسن کا تیل اور شہد ملا کر زخم والی جگہ پر لگائیں۔
  41. بچوں میں پیٹ کے کیڑے ختم کرنے کے لیے کلونجی پانی میں ابال اس کا پانی رات کو سونے سے پہلے پلائیں۔
  42. جوڑوں کا درد روکنے کے لیے نیم کے پتوں کے تیل کی مالش کریں۔
  43. کھانسی دور کرنے کے لیے ایک ایک چمچ شہد اور ادرک کا رس ملا کر روزانہ صبح، دوپہر، شام تین سے پانچ روز تک لیں۔
  44. لہسن جلا کر سرکے اور شہد میں ملا کر لگانے سے پھوڑے پھنسیاں اور نشان دور ہو جاتے ہیں۔
  45. ذیابیطس قابو کرنے کے لیے بغیر چھنے آٹے میںتازہ یا پسی میتھی ملا کر روٹی بنائیے اور روزانہ ناشتے میں کھائیں۔ دو سے تین ہفتوں میں شوگر کنٹرول ہو جائے گی۔
  46. دانت کا درد دور کرنے کے لیے لونگ استعمال کیجیے۔
  47. بلڈپریشر قابو میں لانے کے لیے آڑو، پھلیاں، لوبیا، مٹر، ناشپاتی اور کیلا زیادہ استعمال کریں۔
  48. کولیسٹرول کی سطح کم کرنے کے لیے جئی کا آٹا اور گاجر زیادہ کھائیے۔
  49. سونف کا زیادہ استعمال آنکھوں کی بینائی تیز کرتا ہے۔
  50. شکر اور سونف ہم وزن لے کر اسے کوٹ لیں۔ سر کے چکر دور کرنے کے لیے صبح شام ایک چمچ پانی کے گلاس میں لے لیں۔
  51. صبح نہار منہ روزانہ دو سے تین گلاس پانی پئیں، نظام انہضام درست ہو جائے گا۔
  52. دانتوں کی چمک برقرار رکھنے کے لیے صبح و شام نیم کی مسواک استعمال کریں۔
  53. برص کے داغ دور کرنے کے لیے خالص شہد ایک چمچ، عرق پیاز ایک چمچ اور نمک آدھا چمچ ملا کر داغوں پر لگائیں۔
  54. حمل میں گرمی، قے اور سر درد دور کرنے کے لیے آلو بخارہ زیادہ استعمال کریں۔ آلو بخارہ کا شربت بنانے کے لیے پانچ چھے آلو بخارے رات کو پانی کے گلاس میں بھگو دیں۔ صبح تھوڑی سی چینی اور نمک ملا کر آلو بخارے مسل دیں۔ برف ڈال کر استعمال کیجیے۔
  55. موٹاپا دور کرنے کے لیے اپنی خوراک سے ہر قسم کی چکنائی، مشروبات اور مٹھائیوں کا استعمال بالکل ترک کر دیں۔
  56. ہر قسم کی بیماریوں سے بچنے کے لیے تازہ پھل اور سبزیاں زیادہ سے زیادہ کھائیے۔
  57. دل کی بیماریوں سے بچنے کے لیے صبح و شام سیر کیجیے اور مرغن غذائوں سے پرہیز کریں۔
  58. چھینکوں کی بھرمار سے بچنے کے لیے ایک چمچ میتھی دانہ ایک کپ پانی میں ابال لیں۔ ٹھنڈا کر اور چھان کے سونے سے پہلے دو تین ہفتے تک پئیں۔
  59. ۔ ڈکار دور کرنے کے لیے کھانے کے بعد ادرک کے باریک ٹکڑوں پر نمک چھڑک کر آہستہ آہستہ چبا کر کھائیں۔ اس کے علاوہ سالن میں ادرک اور لہسن کا استعمال زیادہ کریں۔
  60. خون کی کمی دور کرنے کے لیے انار کا رس زیادہ پئیں۔ چقندر کا استعمال بطور سلاد کریں اور سیب بھی خوب کھائیں۔
  61. ہاتھ یا پائوں میں پسینہ زیادہ آتا ہو، تو پانی میں لیموں کا رس یا سرکہ ملا کر دن میں تین بار اور سونے سے پہلے دھوئیں، افاقہ ہو گا۔
  62. پیٹ میں ہر وقت گیس رہتی ہو، تو میتھی کے بیج کھائیں۔
  63. گردے اور مثانے کی پتھری نکالنے کے لیے روزانہ نہار منہ پانچ عدد انجیر کھائیں یا پتھر چٹ پودے کے پتے چبائیں۔
  64. آنکھوں کے گرد حلقے دور کرنے کے لیے صبح سویرے اپنے دائیں ہاتھ کی انگلی بائیں ہاتھ کی ہتھیلی پر رگڑیںاور گرم گرم انگلی آنکھوں کے گرد حلقے پر پھیرئیے۔
  65. جسم کی چربی پگھلانے کے لیے نہار منہ پانی میں شہد اور چند قطرے لیموں ڈال کر روزانہ لیں۔
  66. مسوڑھوں سے خون بہتا ہو، تو جامن کے دو تین پتے دھو کر چبائیے اور آمیزے کو مسوڑھوں پر ملیں۔
  67. بچوں میں ناک کی نکسیر روکنے کے لیے انھیں ککڑی اور کھیرا کھلائیے۔
  68. ناخن مضبوط کرنے کے لیے روزانہ چند ہفتے تک ہلکے گرم زیتون کے تیل میں تھوڑی دیر ناخنوں کو ڈبو کر رکھیں۔
  69. بدہضمی اور بھاری پن سے بچنے کے لیے کھانے کے بعد تھوڑا سا گڑ بطور ’’سویٹ ڈش‘‘ لیں۔
  70. دانتوں میں خون آنے سے روکنے کے لیے ایک لیموں کا رس، ایک پیالی نیم گرم پانی اور آدھا چمچ نمک ملا کر صبح و شام غرارے کریں۔
  71. پھنسیوں پر فالسے کے پتے باریک پیس کر لگانے سے وہ ختم ہو جاتی ہیں۔
  72. قے روکنے کے لیے چھوٹی الائچی یا املی استعمال کریں۔
  73. ۔چھوٹے بچے نمکول کا پانی نہ پئیں، تو دو چمچ شہد، آدھا چمچ نمک، ایک چمچ چینی اور تین چار قطرے لیموں ڈال کر دو گلاس پانی میں حل کر گھریلو نمکول بنا لیں۔ اسہال اور قے کی صورت میں بچوں کو دیجیے۔
  74. ہاتھ جلنے کی صورت میں متاثرہ جگہ گاجر پیس کر اس کا لیپ لگائیں۔
  75. بھاپ سے ہاتھ جل جائے، تو متاثرہ جگہ آلو کے ٹکڑے کاٹ کر ملیں۔
  76. آملہ کا مربہ کھانے سے بار بار نکسیر آنا بند ہو جاتی ہے۔
  77. پیٹ میں شدید درد ہو، تو بڑی الائچی، دارچینی، سونف، پودینہ کا قہوہ بنا کر پئیں۔
  78. آواز بیٹھ جائے تو نیم گرم پانی میں ہلکا نمک ملا کر غرارے کریں یا ملٹھی چبائیں۔ ادرک کے رس میں شہد ملا کر چاٹنے سے بھی گلا ٹھیک ہو جاتا ہے۔
  79. انجیر کھانے سے منہ کی بدبو دور ہوتی ہے۔
  80. ٹیکے کی جگہ سوجنے کی صورت میں برف سے ٹکور کریں۔
  81. آنکھوں کو طراوت دینے کے لیے کچی گاجروں کا استعمال زیادہ کریں۔
  82. ہرے دھنیے کا عرق چھالوں پر لگانے سے وہ دور جاتے ہیں۔
  83. دانتوں میں درد دور کرنے کے لیے لونگ پیس لیموں کے رس میں ملا کر درد والی جگہ پر لگائیں۔
  84. خراب اور کٹے پھٹے ہونٹ ٹھیک کرنے کے لیے گلاب کا پھول آدھا پیس، اس میں ذرا سا مکھن لگا کر ایک ہفتہ تک ہونٹوںپر لیپ کریں۔
  85. زخموں میں پیپ آنے سے روکنے کے لیے دو تا تین جاپانی پھل روزانہ کھائیں۔
  86. جسمانی کمزوری دور کرنے اور وزن میں اضافے کی خاطر روزانہ دودھ کا ملک شیک لیں۔ رات کو گیارہ بادام اور ایک چمچ کشمش آدھی پیالی پانی میں بھگو لیجیے۔ صبح بادام اور کشمش کے دانے کھا کر بچا ہوا پانی پی لیں۔
  87. لیکوریا اور ٹانگوں میں مستقل درد ختم کرنے کے لیے تین ہفتے تک روزانہ صبح کے وقت سات بادام کھائیے۔
  88. آپریشن وغیرہ کے زخم اور نشان دور کرنے کے لیے گھیکوار کے گودے میں تھوڑا سا زیتون کا تیل ڈال گرم کر کے روزانہ لگائیں۔
  89. ہاتھوں میں کھجلی اور خارش روکنے کے لیے گھیا (لوکی) کچل کر صبح شام اس کا رس ہاتھوں پر اچھی طرح ملیں۔
  90. دل کی گھبراہٹ دور کرنے اور ہائی بلڈپریشر روکنے کے لیے ایک پیالی خالص شہد، پھلوں کا سرکہ ایک پیالی اور دیسی لہسن (آٹھ دانے) تینوں اچھی طرح پیس کر آمیزہ فریج میں رکھ دیں۔ ایک ہفتے بعد صبح و شام ایک چمچ لیں۔
  91. سر کی خشکی دور کرنے کی خاطر چقندر کے پتے ابال کر روزانہ اس پانی سے سر دھوئیں۔
  92. موسم گرما میں پیشاب کی جلن اور رکاوٹ دور کرنے کے لیے ’’گرما‘‘ استعمال کریں۔
  93. جلنے کی صورت میں متاثرہ جگہ پر فوری طور پر کسٹر آئل لگائیں۔
  94. خارش دور کرنے کے لیے ناریل کے تیل میں کافور ملا کر متاثرہ جگہ پر لگائیں۔
  95. شہد کی مکھی یا بھڑ کے کاٹنے کی صورت میں نمک سرکہ میں ملا متاثرہ جگہ پر لگا کر ڈنگ نکال دیں۔ درد اور سوجن کم ہو جائے گی۔
  96. آدھے سر کا درد دور کرنے کے لیے لیموں کے چھلکے پیس، اس میں تیل زیتون کا ملا، سرپر لیپ کریں۔
  97. نیند نہ آتی ہو، تو سونے سے پہلے پائوں کے تلوئوں پر خالص سرسوں کے تیل کی مالش کریں اور دو چمچ شہد کھا لیں۔
  98. سخت ہاتھوں کو نرم و ملائم رکھنے کے لیے رات کو سونے سے پہلے لیموں کا عرق، گلیسرین میں ملا کر ہاتھوں میں ملیں۔
  99. منہ کی بدبو دور کرنے کے لیے دن میں دو تین بار سونف چبائیے کر کھائیے۔
  100. آواز بیٹھ جائے تو ایک گلاس پانی میں دو چمچ سونف ڈال کر ہلکی آنچ میں پکائیں۔ جب ایک ابال آ جائے، تو پانی ٹھنڈا کر کے پی لیجیے۔ چینی اور دار چینی بھی ڈال لیں۔ اس قہوے کو دن میں دو تین بار استعمال کریں۔
  101. جسم میں کسی جگہ کانٹا چبھ جائے، تو تھوڑا سا گڑ لے اس میں پیاز کاٹ کر ملائیں اور متاثرہ جگہ باندھ دیں، کانٹا خودبخود نکل آئے گا۔
  102. ۔پائوں کے چھالے دور کرنے کے لیے رات سوتے وقت آبلے پر انڈے کی سفیدی لگا لیں۔
  103. ۔لو لگنے کی صورت میں پیازکا رس، لیموں اور تھوڑا سا نمک ڈال کر پیجیے۔
  104. ۔چھوٹے بچوں میں کھانسی ختم کرنے کے لیے تھوڑی سی کالی مرچ، الائچی پیس کر شہد کے آدھے چمچ میں ملا کر صبح و شام دیں۔
  105. ۔چہرے کی جھریاں دور کرنے کے لیے سو گرام عرق گلاب، ۱۵گرام روغن بادام اور پندرہ گرام پھٹکری لے کر چار انڈوں کی سفیدی ملا ہلکی آنچ پر پکائیں۔ جب آمیزہ یک جان ہو جائے، تو اتار لیں۔ سوتے وقت اس سے چہرے کی مالش کریں۔
  106. ۔کیل مہاسے دور کرنے کے لیے انڈے کی سفیدی پھینٹ کر چہرے پر پندرہ بیس منٹ تک لگائیں۔ بعد میں صابن سے منہ دھو کر صاف کر لیں۔
  107. ۔زکام سے بچنے کے لیے قہوے میں ادرک اور دار چینی ملا کر استعمال کریں۔
  108. ۔دانتوں کے کیڑے ختم کرنے کے لیے، چنبیلی کے پتے پانی میں اُبال لیں۔ اس میں تھوڑا سا نمک ملا کر غرارے کریں۔
  109. صبح چاق چوبند اور تروتازہ رہنے کے لیے ایک پیالی گرم دودھ میں ایک چمچ شہد ڈال سونے سے پہلے روزانہ لیں۔
  110. بار بار پیشاب آنے سے روکنے کے لیے سونے سے پہلے اخروٹ کھائیں۔ چھوٹے بچوں کا سوتے میں پیشاب نکل جاتا ہو، تو انھیں سونے سے قبل تل کے لڈو یا باجرے کی کھچڑی کھلائیے۔
  111. پھل و سبزیاں اپنے اپنے موسم میں بیماریوں کا بہترین علاج ہیں۔ ان کا استعمال زیادہ سے زیادہ کریں۔ رات کو بھوک رکھ کر کھانا بھی بیماریوں سے بچنے کا گُر ہے۔ رات گئے شادی، بیاہ وغیرہ کے کھانے بھی بیماری بڑھنے کا سبب بنتے ہیں۔ اس لیے بے دریغ کھانے سے پرہیز کریں۔
  112. ٹائیفائیڈ بخار کے جراثیم انتڑیوں میں موجود ہوتے ہیں انکو مارنے کے لیے قسط ہندی تھوڑی سی لے کر رگڑ لیں اور مریض کو چٹا دیں۔ یہ عمل دن میں 3 سے 4 بار کریں۔ اگر ٹانسلز یا گلے پڑے ہوں تو بھی یہی کریں۔ جن لوگوں کا ہاضمہ اکثر خراب رہتا ہے ان کیلئے یہ بہترین دوا ہے۔ جتنے بھی شدید موشن آرہے ہوں اس کی گھنٹے گھنٹے بعد چار خوراکیں کافی ہیں۔ (بشکریہ عبقری)
  113. انجیر کھانے سے گردہ، مثانہ اور پتہ کی پتھریاں بھی تحلیل ہو جاتی ہیں۔ یہ سانس کی نالیوں، حلق اور سینہ سے گھٹن کو دور کرتی ہے۔ جالینوس اسے مقوی اعصاب بھی قرار دیتا ہے۔ حدیث کے مطابق یہ بواسیر کو کاٹ کر رکھ دیتی ہے۔ اور نقرس (انگوٹھوں اور انگلیوں) کے درد کے لیے موؑثر ہے۔ دل کے والو کے لیے بھی انجیر بہتر ہے۔
  114. پراسسڈ فوڈ سے دمے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔
  115. گاجر کھانے سے آنتوں، انفیکشن، کینسر، السر کا علاج ہوتا ہے اور چہرے کی شگفتگی برقرار رہتی ہے۔ نیز یہ خون پیدا کرتی، بینایؑ کو تیز کرتی، بادی و بلغمی امراض کو دور کرتی، دل کی دھڑکن کو اعتدال میں لاتی، پتھری اور یرقان میں فایؑدہ مند ہے۔ مردانہ کمزوری اور قوت باہ کے لیے مفید ہے۔ دانتوں اور مسوڑوں کے یے اچھی ہے۔ کمر درد اور ضعف گردہ میں بھی مفید ہے۔
  116. شلجم میں کیلشیم وافر مقدار میں ہونے کی وجہ سے ہڈیوں اور دانتوں کے امراض میں افاقہ ہوتا ہے۔
  117. بند گوبھی انٹی بایوٹیک اثرات رکھتی ہے۔ اس میں کیلشیم، اؑیرن اور معدنیات ہوتے ہیں۔ اس میں جراثیم کو مارنے کی صلاحیت بھی ہوتی ہے۔
  118. مٹر کھانے سے کولیسٹرول اور وزن کم ہوتا ہے۔ قبض دور ہوتی ہے۔
  119. کیلے میں کیلشیم، پروٹین، معدنی نمک، وٹامن سی پایا جاتا ہے۔ یہ خوں پیدا کرتا، گردوں کو طاقت دیتا، جگر کو تقویت دیتا، گلے کی خراش کو دور کرتا، تیزابیت کم کرتا، یرقان میں فایؑدہ مند، پیچش، مروڑ اور کمزور بچوں کو صحت مند کرتا ہے۔
  120. انناس دل، سماغ، جگر اور معدہ کے لیے مفید ہے۔ قبض کشا ہے۔ پیشاب زیادہ لانے کی و جہ سے گردہ اور مثانہ کی پتھری خارج کرتا ہے۔ گرم موسم میں زیادہ استعمال کریں۔

 

 

 


ماخوذ

  • طب نبویﷺ
  • بیماریاں اور انکا علاج