سرویکل کینسر Cervical Cancer

سرویکل کینسر Cervical Cancer کے صرف امریکہ میں ایک اندازے کے مطابق 2018 تک 13،240 مریض شناخت ہو چکے تھے۔ جن میں سے 4،170 عورتیں مر چکی ہوں گی۔ سرویکل کینسر عام طور پر 35 سے 45 سال کی درمیانی عمر میں شناخت ہوتا ہے۔ یہ 20 سال سے چھوٹی عمر کی لڑکیوں میں شاز ہی ہوتا ہے جبکہ 65 سال سے اوپر کی عورتوں میں سے 15٪ کو ہوتا ہے۔

 

سرویکل کینسر Cervical Cancer

مفید معلومات

  • ماہرین کے مطابق تمباکو نوشی سے سرویکل کے ڈی این اے متاثر ہوتے ہیں۔
  • تمباکو نوشی سے قوتِ مدافعت کمزور ہوتی ہے جو کہ کینسر کے مریضوں کے لیے قاتل ہے۔

 

تشخیص

Pap Test ابتدایؑ سٹیج میں شناخت کرنے کا ٹیسٹ ہے۔ یہ کینسر بہت آہستہ بغیر علامات دیۓ اپنے خلیات کی شکل بلنا شروع کر دیتا ہے جیسا کہ سارے کینسرز میں ہوتا ہے۔ اسکے علاوہ جسمانی معایؑنہ اور ایک خاص آلہ سے شناخت کی جاتی ہے۔

 

علامات

عام علامات میں اندام نہانی سے خون یا رطوبت کا آنا، مباشرت کے دوران درد، کولہے اور کمر درد۔

سرویکل کینسر کی بہت ساری سٹیج ہیں۔ پہلی سٹیج کو انگریزی میں carcinoma بھی کہتے ہیں اور یہ کینسر ہونے سے قبل کی حالت ہوتی ہے جس میں سرویکس کی سطح پر متاثرہ خلیات ہوتے ہیں۔ ان خلیات نے ابھی اندرونی دیواروں میں سرایت نہں کیا ہوتا۔ اسکا علاج کرایؑو سرجری، ریڈیشن یا پھر پوری رحم کو نکال پھیکنا ہوتا ہے۔ دوسری سٹیج میں کینسر کے خلیات پھیلتے ہوۓ لمف نظام میں داخل ہونا شروع ہو جاتے ییں۔ ڈاکٹر حضرات رحم کے ساتھ متاثرہ لمف کا حصہ بھی کات کر نکال دیتے ہیں۔ مگر ڈاکٹر سے مشورہ کرنا چاۓ کہ بعض اوقات ایک آدھ بچہ لے کر رحم کو نکال سکتے ہیں۔ اگلے دو سٹیجز میں کینسر کے خلیات سرویکس سے جسم کے دیگر حصوں میں پھیلنا شروع ہو جاتے ہیں۔

 

وجوھات

  • (human papilloma virus (HPV (یہ وایؑرس قضیب، اندام نہانی اور اسکے باہر کا علاقہ، مقعد اور گلے و منہ کو بھی متاثر کر سکتا ہے)
  • اگر حاملہ diethylstilbestrol نامی انگریزی دوا کھا لے۔
  • تمباکو نوشی۔ ایک اندازے کے مطابق سگریٹ میں تقریباً 250 خطرناک کیمیکلز ہوتے ہیں اور ان میں سے بھی 69 کینسر کا باعث بنتے ہیں۔ صرف سگریٹ سے 14 مختلف اقسام کے کینسر ہو سکتے ہیں۔ ان میں پھیپھڑوں، خوراکی نالی، منہ۔ گلے، مثانہ۔ سرویکل، گردے، معدہ، کولون، ریکٹم، خون، جگر اور لبلبہ کے کینسر شامل ہیں۔
  • ایک بیکٹیریا Chlamydia جو کہ مباشرت اور بچہ کی پیدایؑش کے دوران منتقل ہوتا ہے۔
  • دیگر اسباب میں موٹاپا، عمر رسیدگی، پھلوں اور سبزیوں کی کمی، مانع حمل ادویات و آلات، 3 سے زایؑد بچے پیدا ہونا، 17 سال سے چھوٹی عمر میں حاملہ ہونا، باقاعدہ معایؑنہ نہ کروانا، مناسب سہولیات کی عدم فراہمی و عدم آگاہی، ھارمون کی ادویات، موروثی وغیرہ شامل ہیں۔
  • کسی وجہ یا دوا یا بیماری سے قوتِ مدافعت کم ہو جاۓ۔
  • چھوٹی عمر میں ہی جنسی تعلقات استوار کرنے سے یا ایک سے زایؑد جنسی پارٹنرز رکھنے سے۔

غذا و پرہیز

محفوظ جنسی تعلقات قایؑم کریں۔ کنڈوم کا استعمال کریں۔ ایک سے زایؑد ساتھیوں سے جنسی وابستگی نہ کریں۔ اسباب کے مطابق چلیں۔ تمباکو نوشی نہ کریں۔ جنسی تعلقات سے قبل ویکسین کروالیں۔

 

علاج

  • سرجری، ریڈیو تھراپی، کیموتھراپی، امینوتھراپی

 

 

 

 


ماخوذ

  • امریکن کینسر سوسایؑٹی American Cancer Society

Comments are Closed