بواسیر Piles

بواسیر Piles کا علاج کریں

حدیث 1: “اس میں کویؑ شبہ نھیں انجیر کو کھاؤ کہ یہ بواسیر کو کاٹ کر پھینک دیتی ھے اور نقرس (درد) میں فایؑدہ دیتی ھے” حدیث 2: “تمھارے لیے زیتون کا تیل موجود ھے اسے کھاؤ اور لگاؤ کیونکہ یہ بواسیر میں فایؑدہ دیتا ھے”

بواسیر Piles

قدیم اطباء اس بات پر متفق ھیں کہ بواسیر Piles کا شافی علاج نھیں ھے بجاےؑ اسکو کٹوادیا جاےؑ مگر اس بات کی کیا ضمانت ھے کہ دوبارہ نہ ھو۔ بواسیر کی 12 اقسام ھیں جبکہ علاج ایک سا ھی ھے۔ ہم زیادہ تر بادی بواسیر کا زکر کریں گے کیونکہ کہ یہ زیادہ ضدی ہوتی ہے۔ ویسے بھی بواسیر جمع ہے باسور کی جسکے معنی ہیں مسہ۔ بواسیر کی دو بڑی اقسام ہیں ایک اندرونی دوسری بیرونی۔ بیرونی کو بادی بواسیر یا مسوں والی بواسیر بھی کہتے ہیں۔ قانون مفرد اعضاء کے تحت یہ عضلاتی اعصابی بواسیر ہوتی ہے۔ اور اسکا مزاج خشک سرد ہے۔ شروع میں احتیاط اور مناسب علاج سے فایؑدہ یقینی ھے۔ معقد کی آٹھ امراض میں سے مشھور یہ ھیں:

شادی کب کرنی چایۓ؟ ادھر کلک کریں۔

ایسی بیماریاں جو صرف ڈپریشن سے ہوتی ہیں جانیے۔

  1. بواسیر
  2. ریح البواسیر(گیس)
  3. نواصیر
  4. قشرالبواسیر
  5. خروج مقعد
  6. ورم مقعد
  7. شقاق مقعد
  8. خروج مقعد
  9. استرخاء مقعد
  10. قروع مقعد
  11. مقعد غیر مثقوب
  12. فوھات عروق

بواسیر کی مزکورہ بالا قسموں میں سے خواہ کسی کا منہ کھل جاےؑ اس سے خون اور زرد آب آنے لگتا ھے۔ اس صورت میں اس کو دامیہ کھتے ھیں۔ بواسیر کی کویؑ قسم ھو چاھے اندرونی یا بیرونی۔ اندرونی زیادہ ردی اور ضدی ھوتی ھے۔

بواسیر Piles کے بارے مفید معلومات

  • بادی بواسیر کا سبب غلیظ سوداوی خون ھوتا ھے جس کے پیدا ھونے کی دو صورتیں ھوتی ھیں۔ اول گرم غزاوؑں یا دواوؑں کا کثرت استعمال یا صفراء حاد محترق کے اختلاط سے خون میں احتراق پیدا ھو جاتا ھے اور یہ خون بواسیر کا سبب بنتا ھے۔ دوم سوداوی اشیاء کی زیادتی سےغلیظ سوداوی خون بنتا ھے جس سے سوداوی بواسیر عارض ھو جاتی ھے۔

  • بادی بواسیر کے اکثر مریضوں ک رنگت سیاہی مایؑل ھوتی ھے۔ جن لوگوں کو اکثر غزایؑں موافق نہ آیؑں یا مزاج کے مطابق نہ ہوں۔ انکو دوایؑں اثر نہ کریں یا کم اثر کریں۔ ایسے لوگ سخت سوداوی مزاج کے ہوتے ہیں یا ان میں بواسیری مادہ پایا جاتا ہے۔

  •  ایسے افراد جن میں خلط سوداء کی افزائش قدرتی طور پر زیادہ ہوتی ہو یا سوداء پیدا کرنے والے غذائی اجزاء کے استعمال سے خلط سودا بڑھ جائے کو بھی بواسیر تنگ کرنے لگتی ہے۔چائے اور سگریٹ نوش،پان،تمباکو اور نسوار کھانے والے افراد بھی اس موذی مرض کے چنگل میں گرفتار دیکھے جا سکتے ہیں۔ متواتر اینٹی بائیو ٹیک اور دافع امراض قلب کی ادویات استعمال کرنے والے لوگ بھی اکثر بواسیر کی بیماری میں مبتلا پائے جاتے ہیں۔

  • piles بادی بواسیر کو کہتے ہیں جبکہ hemorrhoids خونی بواسیر کو کہتے ہیں۔ ویسے بھی ہیمورایؑڈز کے یونانی معنی جریان خون کے ہیں۔

اسباب و پرھیز

گاڑھا دودھ، سرخ گوشت، سرخ مرچ، کچا آم، کچا لیموں، بینگن، لہسن، ادرک، سوہانجنہ، کشمش، چنے اور چنے کی دال، سویابین، باجرہ، جوار، انڈا، تلی خوراک، کین خوراک، پاپ کارن، مکیؑ، مصالحہ دار اغزیہ، کٹھے پھل، بیکری کی اشیاء، نمکیات، فولاد (اگر قبض کرے)، کچے پھل، چھنا آٹا، فرکٹوز، سوڈا بوتل، موٹرسایؑکل، گھڑ سواری۔

تادیر بیٹھنا، گرم اور تیز اشیاء کا استعمال، موروثی، ریاح و سرد خشک اشیاء کا کثرت استعمال، قبض، مسہل، دماغی تناؤ، مقعد میں مباشرت۔

خوراک

فاؑبر، وٹامن سی، بادام، ان چھنا آٹا، کھیرا، امرود، پپیتہ (جس میں کالی بیج نہ ہو)، سبز پتوں والی سبزیاں، ٹماٹر، زیتون تیل، پالک، اخروٹ، پستہ، جامن، کٹھا سیب، کالی کشمش، میٹھا سیب، انگور، انجیر، اسٹرابری، میٹھے پھل، چقندر، گاجر، گرین چاےؑ، کالی چاکلیٹ، شملہ مرچ، ھلدی، میٹھا سیب، ناریل پانی، شھد، پکا ہوا لیموں، کتھا سفوف۔

طریقہ علاج

بواسیر کی کویؑ بھی قسم ہو علاج کے لیے 4 مراحل یاد رکھیں۔ اگر پرانی بواسیر کی بات کریں تو سب سے اچھا علاج ربڑ بینڈنگ ہے جس میں ایک آلہ کے زریعے مسے کی جڑ پر ایک ربڑ چڑھا دی جاتی ہے۔ کچھ دونوں بعد مسے سوکھ جاتے ہیں۔ بواسیر کی بیماری میں قبض نہ ہونے دیں اسکے لیے تفصیل یہاں دیکھیں۔

  • خوراک اور سیلف کیؑر
  • لگانے والی ادویات
  • کھانے والی ادویات
  • بغیر اپریشن علاج (Rubber Banding Legation, Injection, Electrotherapy, Laser)
  • اپریشن

طبیب کے متعلق چند ضروری ہدایات

مریض کے متعلق چند ضروری ہدایات

مفید ٹوٹکے

  1. قلمی شورہ 1 ماشہ، دودھ بکری 3 پاؤ کے ساتھ چینی ڈال کر صبح پی لیا کریں۔ ترش و گرم اشیاء سے پرھیز کریں۔

  2. برگد (بوڑھ) کی چھال 2 تولہ کو آدھا سیر پانی میں جوش دیں جب پانی پاؤ رہ جاۓ تو اس میں 1 تولہ گاۓ کا گھی اور چینی ڈال کر پی لیں۔

  3. پھلے دن 10 قطرے برگد کے دودھ کے تازہ چینی پر ٹپکاۓ اور کھا لے۔ پھر اگلے دن 11 قطرے کر دے۔ ھر روز 1 قطرہ بڑھاتا جاۓ جب 25 قطروں پر پھنچ جاۓ تو ایک ایک قطرہ اسی طرح کم کرتا جاۓ اور 10 قطروں پر لا کر چھرڑ دے۔

  4. کریلے کا تھوڑا سا رس نکال کر لسی کے ساتھ صبح پی لیں 1 ھفتہ۔

  5. بکری کا دودھ 1 کپ میں سرسوں کے بیج ا چمچ ڈال لیں اور چینی ڈال کر صبح نھار منہ پی لیا کریں۔

  6. آم کی گھٹلی خشک کر کے پیس لیں۔ اس سفوف میں میں 2 چمچ شھد ڈال کرروزانہ 2 دفعہ پی لیا کریں۔

  7. ادرک اور کم کٹھا لیموں کا رس 1-1 چمچ لیں اور اس میں پودینہ اور شھد ڈال کر چٹنی سی بنا لیں۔ 2 دفعہ کھانے کے ساتھ کھایں۔

  8. بواسیری درد کو روکنے کے لیے کیلے کا ملک شیک 3 دفعہ پیںؑ۔

  9. کتھے کا سفوف لیموں کے ساتھ لیں۔

  10. کھڑبیل کا سفوف 5 گرام صبح شام بعداز غزا۔

  11. روزانہ صبح نھارمنہ نمک لگا کر جامن کافی سارے کھایں۔

  12. شلجم، شلجم کے پتے، پالک، گاجر، انکا جوس بنا کر پیں۔

  13. بواسیر والی جگہ پر ناریل کا تیل لگایں۔

  14. 3-5 دانے انجیر رات پانی میں بھگو دیں صبح انجیر کھا لیں اور پانی بھی ساتھ نہار منہ پی لیں۔ 1 گھنٹہ اور کو یؑ چیز نہ کھایں۔ بو علی سینا کے مطابق 4 دن سے 1 ماہ تک لگاتار انجیر کھایں۔

  15. 1 چمچ زیرہ کا سفوف روزانہ نھار منہ پانی میں ڈال کر پی لیں۔

  16. مٹھی بھر تل لے کر آدھا لیٹر پانی میں ابال لیں۔ جب پانی ایک تھایؑ رھ جاۓ تو اس پیسٹ میں تھوڑا سا مکھن ڈال کر روزانہ 1 دفعہ کھایں۔

  17. 5 گرام قلمی شورہ کے 3 حصے کر لیں۔ رات کو 1 حصہ ھمراہ نمکین لسی لیں۔ اسی طرح دوسرا حصہ نمکین لسی کے ساتھ صبح ناشتہ سے قبل لیں۔ اسی طرح تیسرا حصہ نمکین لسی کے ساتھ رات کو لیں۔

  18. 100 گرام زیتون کے تیل میں 20 گرام کلونجی اور 20 گرام مہندی کے خشک پتے جلا لیں۔ جب جل جایں تو چھان لیں۔ رویؑ کی مدد سے صبح شام لگایں اور 1 چمچ کھانے والا صبح شام دودھ کے ساتھ استعمال کریں۔ انشااللہ فایؑدہ ہوگا۔

  19.  100 گرم ارنڈ کے تیل (Caster Oil) کو گرم کر کے اتار لیں اب اس میں 6 گرام سہاگہ، 3 گرام نوشادر، 25 گرام کافور کو پیس کر ملا لیں۔ یہ لگانے کے لیے ہے۔ اب ہلکی آنچ میں گاڑھا کر لیں۔ رویؑ کے ساتھ صبح شام لگایں۔

  20. اجوائن خراسانی ،تخم گندانا ،مغز بکائن ،مغز اندرائن ،رسونت صاف اور مصبر تمام ادویا ت دس دس گرام لیں اور تمام ادویات کو خوب باریک کر کے پانی کی مدد سے گولیاں تیار کر لیں۔ ایک گولی صبح ایک گولی شام تازہ پانی کے ساتھ لیں اور ایک گولی کو لعاب دہن میں مکس کر مسوں پر لگایں۔

  21. انگور دس تولہ رسونت دو تولہ مغز نیم ایک تولہ م صبر ایک تولہ لیں۔ تمام ادویات کو خوب باریک پیس کر پانی کی مدد سے نخودی گولیاں تیار کر لیں۔ ایک گولی صبح اور ایک گولی شام ایک چمچ دیسی گھی کی ایک گلاس دودھ میں ڈال کر پئیں صبح و شام۔ خونی بادہ میں مفید ہے۔

  22. بارش کا پانی لےکر 70 مرتبہ سورۂ فاتحہ ، 70مرتبہ آیت الکرسی  اور70،70مرتبہ چاروں قل پڑھ کردم کریں دنیا کے ایسے مریض جو لاعلاج ہو چکے ہیں۔اسے دم کرکے پلائیں اللہ کے فضل سے مریض ایسے ٹھیک ہوتا ہے جسکا گمان نہیںہوتا ۔اگر بارش کا پانی مزید نہ ملے تو سادہ پانی ملا کر بڑھا تے رہیں ۔چند دن یا زیادہ عرصہ مریض کو استعمال کروائیں۔ (عبقری)

  23. بادی سواسیر: یہ عضلاتی اعصابی مرض ہے اس میں مسے بڑے بڑے ہوتے ہیں اور خون نہیں آتا۔ اس میں کلکیریا اور فیرم فاس ملا کر دیں۔ اگر سوداوی بواسیر (عضلاتی غدی) ہے تو نیٹرم سلف اور کلکیریا سلف ملا کر کھلایں۔ (بایوکیمک اور نظریہ مفرد اعضاء)

  24. غدی عضلاتی قہوہ پلایں۔ اجوایؑن دیسی 6 ماشہ، تیز پتہ 6 عدد، انجیر خشک 3 عدد۔ تمام اشیاء ڈیڑھ پاؤ پانی میں ڈال کر گرم کریں جب ایک پاؤ رہ جاۓ تو اتار کر پن چھن کر پیؑں۔ اسکے ساتھ غدی اعصابی تریاق استعمال کریں۔ نسخہ یہ ہے۔ نیلا تھوتھا، جمالگوٹا،  سیر مدار، ہر ایک 1 تولہ، رایؑ 10 تولہ، سہاگہ 7 تولہ۔ کوٹ چھان کر سفوف بنایں۔ 2 چاول سے 1 ماشہ تک استعمال کریں۔ غدی اعضابی تریاق کی جگہ یہ بھی استعمال کر سکتے ہیں۔ عضلاتی اعصابی شدید: کرنجوہ، آملہ، دونوں 5-5 تولہ، پھٹکڑی سوختہ 10 تولہ کوٹ چھان کر سفوف بنا لیں۔ 4 رتی سے 1 ماشہ ہمراہ آبِ تازہ۔ اگر قبض ہو تو اسی نسخہ میں ہلیلہ سوختہ 20 تولہ شامل کریں۔ (بایوکیمک اور نظریہ مفرد اعضاء)

 بواسیر Piles

بواسیری علاج

  1. خونی بواسیر کے لیے: گوند کیکر، گوند کتیرا، گیرو تمام کو ھموزن کوٹ چھان کر سفوف بنا لیں۔ صبح شام ایک چمچ ھمراہ پانی یا دودھ لیں۔

  2. رسوت 10 تولہ کو مولی کے اڑھایؑ پاؤ پانی میں چارصبح سے شام تک تر رکھیں۔ پھر پانی صاف کر کے حاصل کرلیں۔ اب گل سرخ 2 تولہ، قند سیاہ 1 تولہ، تخم نیم 2 تولہ، تخم بکاین، سورنجاں شریں، 6 ماشہ، کویؑلہ کریر 1 تولہ، سبکو پیس کر مولی کے پانی میں کھرل کریں۔ جب خشک ھو جاۓ تو 10 تولہ گلاب کے عرق میں کرکے چنے برابر گولیاں بنا لیں۔ 2 تولیاں سرد پانی کے ساتھ روزانہ۔ غزا میں صرف چپاتی اور گھی ملیدہ کر کے کھلایں۔ چند یوم میں بواسیر زایل ھو گی۔

  3. یہ نسخہ ایک راز تھا جو بے کس اور مجبور لوگوں کو دیکھتے ھوۓ اشکار کر رھے ھیں۔ پھلی خوراک سے ھی خونی بواسیر کو افاقہ ھوجاتاھے۔ ھلیلہ سیاہ 1 تولہ، پوست ھلیلہ زرد ڈھایؑ تولہ، کچور2 تولہ، تخم نیم ڈھایؑ تولہ، سرمہ سفید سواتولہ، کشتہ فولاد 1 تولہ، چاکسو 2 تولہ، ناگر موتھ 2 تولہ، ریوند خطایؑ سوا تولہ، مرچ سفید سوا تولہ، ایلوا 10 تولہ، رسونت 20 تولہ، ایکسڑیک بیلاڈونہ ڈھایؑ تولہ، سبکو کوٹ چھان کر چنے برابر گولیاں بنا لیں۔ 1 گولی ھمراہ سادہ پانی صبح شام۔ تمام اقسام کی بواسیر کا شافی علاج ھے۔

  4. رسوت اصلی 10 تولہ، گوگل بھینسا 10 تولہ، تخم سرس 5 تولہ، نر کچور 5 تولہ، کتھ گلابی 1 تولہ، کافور 1 تولہ۔ رسوت و گوگل کو نصف سیر آب مولی میں جوش دے کر چھان لیں۔ باقی ادویات باریک پیس کر کوٹ چھان کر شامل کر لیں۔ جنگلی بیر برابر گولیاں بنا لیں۔ اکثر مایوس مریض اس سے صحت حاصل کر چکے ھیں۔ 1-1 گولی صبح شام اگر مسؑلہ زیادہ ھے تو 2-2 کر دیں۔ ھر قسم کی بواسیر کے لیے اکیسر ھے۔

  5. تخم نیم 2 تولہ، مقل ارزق 2 تولہ، رسوت اصلی 2 تولہ، گندھک آملہ سار2 تولہ، فلفل سیاہ 2 تولہ، اجوایؑن خراسانی 2 تولہ، ھلیلہ زرد 2 تولہ، سب کو کوٹ چھان کر سفوف بنا لیں۔ دوا تیار ھے۔ 2 ماشہ صبح شام ھمراہ آب سادہ۔ مسیحایؑ اثر والا نسخہ ھے اور خونی بواسیر کے لیے اکثیر ھے۔

  6. چاکسو 1 پاؤ، رسوت 1 پاؤ، گندھک مدبر2 تولہ، کسی کڑاھی میں ڈال کر آب ترب، آب برگ بکایؑن اور آب درخت کیلا ھموزن لے کر سات روز نیم کی لکڑی سے اس قدر گھوٹیں کہ گولیاں بنانے کے قابل ھو جایؑں۔ 2-3 گولیاں صبح شام ھمراہ باسی پانی۔ کھنہ سے کھنہ مرض جاتی رھے گی۔

  7. رسکپور 1 رتی، قرنفل گلدار 21 عدد، اجوایؑن خراسانی 1 ماشہ۔ نھایت باریک پیس کر بالایؑ ڈال کر 9 گولیاں بنا لیں اور دودھ کے ساتھ استعمال کریں۔ بواسیر کے لیے تریاق سے کم نیھں۔

  8. ناگیسری: کافور بھیم سینی 6 ماشہ، ناگ کیسرڈیڑھ تولہ، رسوت 6 ماشہ، گندھک مصفیٰ 6 ماشہ، منقیٰ کا گودھا 6 ماشہ، سبکو کوٹ کر چنے برابر گولیاں بنا لیں۔ 2 گولیاں صبح ھمراہ پانی۔ ھر قسم کی بواسیر کے لیے اکیسر ھے۔

  9. مشک کافور، رسوت دونوں مساوی وزن کو انگوری سرکہ میں کھرل کر کے دانہ مونگ کے برابر گولیاں بنا لیں۔ صبح و رات کو ھمراہ آب گرم۔

  10. مربہ ترب: ترب مولی کو کھتے ھیں۔ آدھا سیر مولی کو چھیل کر موٹے موٹ ٹکڑے کر لیں۔ گاۓ کے گھی میں بھونیں زیادہ سرخ نہ ھو۔ پھر سوا سیر مصری کا قوام بنا کر مولی کو اس میں ڈال دیں۔ باقی ادوایات کے ساتھ یہ مربہ استعمال کریں۔

  11. زنجبیل، رال سفید، دانہ چھوٹی الایؑچی، زنگار سفید، مردارسنگ، کتھ، ھر ایک 6-6 ماشہ کو کوٹ چھان لیں۔ 1 چھٹانک اناردانہ کے پانی میں سب سفوف کو بھگو دیں صبح کو کھرل کر کے گولیاں بنا لیں۔ 1 گولی صبح ھمراہ 1 گھونٹ گاۓ کا گھی استعمال کریں۔ خونی و بادی بواسیر کے لیے اکسیر ھے۔

  12. ریٹھے کے چھلکے کا سفوف 1 چھٹانک، رسوت مصفیٰ نصف چھٹانک، پرانا گڑ 1 چھٹانک، دانہ مٹر برابر گولیاں بنا لیں۔ 1-1 گولی صبح شام پانی کے ساتھ، پرھیز ضروری ھے۔

  13. مقل ارزق، رسوت مصفیٰ، گیرو، مغز تخم نیب، مغز تخم بکایؑن، تخم گندنا، پوست ھلیلہ زرد، زرد نباد، ھر ایک 1-1 تولہ، سب خوب پیس کر مولی کے پانی میں گھوٹ کر گولیاں بنا لیں۔ خونی بواسیر میں 2-2 گولیاں صبح شام ھمراہ شربت نیلوفر اور انجبار استعمال کریں۔ ریحی بواسیر میں 1-1 گولی صبح شام ھمراہ عرق بادیان و عرق مکو استعمال کریں۔ یہ نسخہ سب سے زیادہ پرتاثیر ھے۔

  14. سنگجراحت، گیری دونوں ھموزن لے کر مولی کے پانی میں اس قدر کھرل کریں کہ ٹکیہ بن جاۓ، ٹھیکری کے درمیان رکھ کر تین سیر صحرایؑ اوپلوں کی آگ دیں۔ ٹکیہ نکال کر پیس لیں اور محفوظ رکھیں۔ 1 ماشہ ھمراہ شربت تخم بالنگو دن میں 3 دفعہ دیں۔ 11 دنوں میں عمر بھر کے لیے فایؑدہ دے گا۔ (شربت ٹخم بالنگو: مصری 5 تولہ پانی 12 تولہ میں حل کریں۔ اور 3 ماشہ تخم بالنگو ملا کر استعمال کریں)۔

  15. ڈاکٹر شالینی کے مطابق سٹول کو سافٹ رکھیں۔ یہ اس وقت بھی ہوتا ہے جب پیشاب زیادہ آۓ۔ جب پیٹ بہت زیادہ تیزاب بناۓ تو اسکو کم کریں یہی نیچے آکر چھیل جاتا ہے۔ یہ تیزاب لبلبہ بناتا ہے جوکہ بہت زیادہ تیز ہوتا ہے۔ یہ گھریلو علاج 2 سنٹی میٹر سے کم زخم کے لیے ہے۔ اور یہ 100٪ ٹھیک ہو جاۓ گا اگر ساری ہدایات پر عمل کریں۔ سب سے پہلے پیٹ کی گرمی اور بادی دور کرنے کے لیے ان چیزوں سے مکمل اجتناب کرنا ہے مکمل آرام کے بعد بھی 2-3 ماہ تک۔ سرخ مرچ، سبز مرچ، لہسن، آم، کالی مرچ، خاص طور پر کالے چنے اور دال چنا، بینگن، ادرک، پاپ کارن یا کسی بھی طرح کی مکیؑ کیونکہ اس میں فرکٹوز ہوتا ہے، مونگ کے علاوہ ساری دالیں، کافی، سبز چاۓ، باجرہ، جوار، سہانجنہ، سارے لوبیے، میٹھی چیزیں نہیں کھانی جیسے میٹھایؑ، کھجور، کشمش، ۔ اب جو چیزیں کھانی ہیں ان میں 100گرام روزانہ کھیرا ناشتہ اور کھانے سے قبل، پپیتہ پکا ہوا، جامن، ترش سیب، کالی کشمش، آملہ، میٹھی دہی، سینک یا ابال کر لیموں پر کتھا لگا کر کھاہں, کھڑبیل کا سفوف 5 گرام ناشتہ اور کھانے کے بعد رات کو نہیں، کٹھل کا پھل صرف اسی صورت جب آپ کتھا نہیں کھا رہے۔ (کٹھل آپکی آنت کو صاف کرتا ہے جب آپ روزانہ اسپغول نہیں لے سکتے تو اسکی چاۓ پی سکتے ہیں)، ناریل کا پانی 50 ملی لٹر تک، چنے کا ستو، کران بری، چارکول 1 ٹبلٹ روزانہ کھانے کے بعد۔ (تفصیل دیکھیں)

  16. عرق مکو اور عرق بادیان دونوں 30-30 گرام، معجون دبیدالورد 7 گرام تینوں چیزیں صبح شام لیں۔ سوتے وقت اطریفل مقل نیم گرم پانی سے لیں۔ مسوں پر لگانے کے لیے کیسٹر آیؑل، روغن نیم، ست پودینہ ہر ایک 6 گرام میں کافور 3 گرام ملا کر تھوڑا تھوڑا مسوں پر لگایں۔

  17. مغز تخم نیم، مقل ازرق، رسونت مصفٰی، گندھک آملہ سار مصفٰی، فلفل سیاہ، ہر ایک 2 تولہ۔ سب کو کوٹ چھان کر سفوف بنا لیں۔ 2 ماشہ صبح شام ہمراہ شربتِ انار یا آبِ انار۔ یا پھر یہ نسخہ استعمال کریں۔ رسونت مصفٰی 10 تولہ، گوگل بھینسا 10 تولہ۔ مولی کا پانی 2 سیر رات کو جوش دے کر رکھ لیں۔ صبح چھان کر کڑاہی میں ڈال کر پکا کر گاڑھا کر لیں۔ تخم سرس 5 تولہ، نرکچور 5 تولہ باریک پیس کر ملا لیں۔ جنگلی بیر برابر گولیاں بنا لیں۔ 1-2 گولی صبح شام ہمراہ پانی۔ یا پھر یہ نسخہ استعمال کریں۔ رہشہ خطمی 6 ماشہ بھگو کر لعاب نکالیں، سونف 1 تولہ، تخم خیارین 6 ماشہ پانی میں سردایؑ کی طرح پیس کر شربت بنفشہ 2 تولہ ملا کر اسپغول 7 ماشہ کھا کر پی لیں۔ (بشکریہ بیاض سایؑیں بخش)

  18. قلمی شورہ 10 تولہ، پوست رہٹھا 10 تولہ، مصبر 5 تولہ۔ مصبر اور قلمی شورہ کو باہم کھرل کر لیں پھر رہٹھا ڈال کر گل حکمت کریں اور 10 سیر اپلوں کے آگ دیں۔ ٹھنڈا ہونے پر کھرل کر کے رکھ لیں۔ ہموزن نمک انجبار اور دم الافیون شامل کر کے کیپسول بھر لیں۔ 1 کیپسول شام 5 بجے شربت انجبار کے ساتھ روزانہ لیں۔ یا پھر یہ نسخہ آزمایں۔ گندھک آملہ سار 2 تولہ، قلمی شورہ 10 تولہ، خون شیاؤ شان 3 تولہ۔ ایک کڑاہی میں نصف قلمی شورہ بچھا کر اوپر گندھک آملہ سار اور خون شیاؤ شان بچھا کر اوپر بقیہ قلمی شورہ بھی ڈال دیں۔ خوب دبا کر خلاء نکال دیں۔ آگ پر چڑھا دیں تمام اشیاء مایع شکل اختیار کر لیں گی۔ منجمند ہوکر کھرل کر کے شیشی میں رکھیں۔ روزانہ صبح 2 رتی مکھن یا بالایؑ کے ساتھ۔ (بشکریہ بیاض مہتاب)

  19. مرہم بواسیر: ہڑتال، زنگار، ایلوا، دارچکنا ہر ایک 6 گرام۔ عرق پیاز میں 4 رتی برابر گولیاں بنایں۔ 1 گولی روزانہ پانی میں گھس کر مسوں پر لگایں۔ ساتھ معجون مقل 6-6 گرام صبح شام کھایں۔ (بیاض حبان)

  20. قاطع مسہ بواسیر: کافور، رسوت، مردار سنگ، نیلاتھوتھا ہر ایک 10 گرام کوٹ چھان کر اس میں میں منقی اس قدر ڈالیں کہ ٹکیہ بن جاۓ۔ ایک ٹکیہ تمام مسوں پر باندھیں صبح حقہ کے پانی سے دھو لیں۔ 7 یوم میں صحت کامل ہو گی۔ (بیاض حبان)

  21. حب بواسیر: کافور 10 گرام، رسوت 10 گرام، مغز تخم بکایؑن 20 گرام، گیرو 10 گرام، تخم گندنا 20 گرام، پوست ہلیلہ زرد 40 گرام، سب ادویات کو کوٹ چھان کر کوکڑ چھلنی کے عرق میں گولیاں بنا لیں۔ صبح شام 1 گولی ہمراہ پانی۔ (بیاض حبان)

  22. مرہم مازو بواسیر: مازو، کتھہ، پھٹکری، ہر ایک 6 گرام، افیون 2 گرام، توتیا 1 گرام، سب کو باریک پیس کر روغن گاؤ 50 گرام میں ملایں۔ وقت ضرورت مسوں پر لگایں۔ خارش، جلن، ورم کو فایؑدہ دیتا ہے۔ (بیاض حبان)

  23. سفوف فولادی: بادیان، پوست ہلیلہ زرد، پوست بلیلہ قابلی، آملہ، تخم کاسنی، بہیڑہ، کشتہ فولاد ہر ایک 20 گرام۔ نمک لاہوری، نمک سانبھڑ، نمک منھاری، نمک نشور، ہر ایک 10 گرام۔ ست گلو 3 گرام۔ ہر ایک کو کوٹ چھان کر سفوف بنا لیں۔ مقدار خوراک: 3 ماشہ سے 6 ماشہ ہمراہ پانی۔ خون صاف کرتا، بدن فربہ، بھوک بڑھاتا، ھاضم طعام، معدہ آنتوں اور بواسیر کا خون بند کرتا ہے۔

  24. رسوت، مقل، تخم گندنا، ہر ایک 1 تولہ کو کوٹ پیس کر بقدرحاجت گلاب یا آبِ گندنا سبز کے ساتھ چنے برابر گولیاں بنا لیں۔ 3 گولیاں رات کو کھلایں۔ ہمراہ کویؑ قبض دور کرنے کی دوا لیں۔ دورہ ختم ہونے کے بعد کشتہ فولاد 1 قرص صبح کو کھلا دیا کریں۔ یا پھر یہ نسخہ استعمال کریں۔ رسوت، مغز تخم نیم و بکایؑن، ہلیلہ سیاہ، نر کچور، مقل، فلفل سیاہ، مصطگی رومی ہر ایک 6 ماشہ سب کو کوٹ کر ککروندہ کے عرق میں بیر برابر گولیاں بنا لیں۔ 2 گولیاں رات کو کھلایں۔ نیز تمام مقوی معدہ و امعاء اور کاسر ریاح اور ملین دوایؑں اس مرض میں مفید ہوتی ہیں۔ (حاذق)

  25. مولی کا رس 1 کپ دن میں دو دفعہ لیں۔ چند دن بعد 3 کپ تک کر لیں۔ 3-4 انجیر رات کو بھگو کر صبح کو انجیر خالی پیٹ کھایں۔ (علاج باالغزا UNESCO)

  26. لعاب ریشہ خطمی 5 ماشہ، شیرہ حب الاس، شیرہ بیخ انجبار ہر ایک 3 ماشہ پانی میں نکال کر شربت بنفشہ 2 تولہ ملا کر اسبغول مسلم 7 ماشہ چھڑک کر پلایں۔ یا پھر یہ نسخہ آزمایں۔ رسوت مقل ہر ایک 1 ماشہ پیس کر جوارش جالینوس 7 ماشہ میں ملا کر ہمراہ شیرہ بادیان 5 ماشہ، لعاب ریشہ خطمی، شیرہ عنب الثعلب ہر ایک 3 ماشہ، عرق بادیان 12 تولہ میں نکال کر خمیرہ بنفشہ 4 تولہ شامل کر کے اسبغول مسلم 7 ماشہ چھڑک کر پلایں۔ (حکیم حافظ طاہر محمود)

  27. لگانے کے لیے وج اور نیلا تھوتھا ہموزن لیں اور باریک پیس کر رکھ لیں۔ بوقتِ ضرورت باسی پانی میں گھول کر مسوں پر نہایت آہستگی سے لیپ کریں اور ارنڈ کا پتا باندھ کر لنگوٹ کس لیں۔ پہلے اور دوسرے دن کوؑی فایؑدہ نہیں ہو گا۔ تیسرے دن کے استعمال سے مسے غایؑب ہو جاتے ہیں۔ خون کا آنا موقوف ہو جاتا ہے۔ بواسیر ہمیشہ کے لیے چلی جاتی ہے۔ (حکیم حافظ طاہر محمود)

  28. ھمردر کی یہ ادویات بھی آزمایں۔ نیمو ٹیب، نیمورایؑڈ مرھم یا پھر مرھم سایؑدہ چوب نیم لگایں۔ تفصیل پیکٹ کے اوپر لکھی ہوتی ہے۔

  29. (از علم الامراض حصہ اول)

  30. بادی بواسیر کے نفسیاتی اسباب: لزت و مسرت کے جزبات کی شدت، کثرت جماع، جنسی تحریک۔ مادی اسباب: سوداء کی کثرت، ترش و کھٹی اشیاء، خشک و سرد اشیاء، شدید قبض۔ عضوی اسباب: قلب و عضلات کی کیمیاوی تحریک۔ بادی بواسیر کی سب سے بڑی علامت قبض۔ دوسری علامت مسے اور تیسری علامت خارش ہے۔ اسکے علاوہ ریاح اور ڈکار کی کثرت ہوتی ہے۔

  31. مسے کیوں پیدا ہوتے ہیں ؟۔ دراصل بادی بواسیر قلب و عضات کی عضلاتی اعصابی تحریک ہوتی ہے اس وقت دوران خون دماغ و اعصاب سے قلب و عضلات کی طرف زیادہ ہو رھا ہوتا ہے۔ جبکہ جگر و غدود کی طرف دوران خون کم ہو جاتا ہے جس کی وجہ سے جگر و غدود میں سستی آ جانے سے یہ فضلات خارج نہیں کر پاتے پھر غدود پھولنا شروع ہو جاتے ہیں اور عضلات جلدی ٹھیک نہیں ہوتے۔ اگر معقد کے غدود اور عضلات میں فضلات جمع ہونے شروع ہو جایں تو مسے بنتے ہیں۔ لہزا جگر اور غدود کے افعال درست کرنے ضروری ہیں۔

  32. علاج: چونکہ اسکی وجہ ترشی، تیزابیت اور خلط سوداء کی کثرت ہوتی ہے۔ عضلاتی اعصابی تحریک کی وجہ سے سوداء کا اخراج بند ہو جانے سے مسے پھول جاتے ہیں۔ اگر ایسا مرض آ جاۓ تو اسے عضلاتی غدی (خشک گرم) میں تبدیل کریں جس سے ترشی، تیزابیت اور سوداء میں سے اخراج شروع ہو کر مسے آہستہ آہستہ سکڑنا شروع ہوجاتے ہیں۔ اسکے لیے عضلاتی غدی غزایؑں و دوایؑں دہں۔ اگر قبض زیادہ نہ ہو تو عضلاتی غدی ملین دیں ورنہ عضلاتی غدی مسہل دیں۔ نۓ اطباء شروع سے ہی مسہل دیتے ہیں جن سے بجاۓ فایؑدے کے نقصان ہوتا ہے اور اطباء حیران ہوتے ہیں کہ یہ کیا ہو گیا۔ پرہیز: ترش و سرد اشیاء۔ علاج: اجوایؑن دیسی، تیزپات، رایؑ ہر ایک 4 تولہ۔ سفوف بنا لیں۔ مقدار خوراک: 1 تا 4 ماشہ دن میں 4 بار۔ اگر ہلکی قبض ہو تو ساتھ گندھک آملہ سار 12 تولہ ملا کر مقدار خوراک 4 رتی سے 1 ماشہ روزانہ کر دیں۔ اگر شدید قبض ہو تو 1 تولہ جمالگوٹہ مزید ملا کر 1 رتی سے 3 رتی خوراک کر دیں۔

  33. فایؑدے: یہ بادی بواسیر کے علاوہ یورک ایسڈ، ریاح، درد معدہ، آنتوں میں بے چینی، پھوڑے، پھنسی، چنبل، خارش، گردے و مثانے کی پتھری، کالا یرقان اور خونی بواسیر کا بھی علاج ہے۔ نوٹ: اکثر سوداوی امراض کی وجہ سے خون گاڑھا ہو جاتا ہے اور مصفٰی خون فایؑدہ دیتی ہیں۔ عضلاتی غدی غزایؑں: ساگ سرسوں، میتھی، مرغ، پرندوں کا گوشت، پیاز، لہسن، دیسی اجوایؑن، کڑوا بادام، میٹھی خوبانی انجیر انگور آم کچھور شہتوت، پستہ چلغوزہ کاجو، یخنی، آم کا مربہ، اچار سہانجنہ، انڈے والے توس، میٹھا انڈہ، دیسی گھی، چنے کی دال کا حلوہ۔ عضلاتی غدی محرکات: ابہل، اسطوخودوس، افنستین، بابچی، بالچھڑ، عشبہ، عودصلیب، شاہترہ، گلو، تانبہ، مشک، بینگن، چاکسو، خراطین، سندور، ازراقی، اگر، بیربہوٹی، پرسیاؤشان، پوہکر مول، فایؑفل، جاوتری، جدوارخطایؑ، دارچینی، درمنہ ترکی، زراوند طویل، زراوند مد حرج، زوفا، سریش، سمندر پھل، مالکنگنی، مروارید، کٹکی، مین پھل، نک چھکنی، نیم، بکایؑن، رسوت، سرنجاں تلخ، سنگرف، مرچ سرخ، گھونگھی، مرمکی، لہسن، زنگار تانبہ، مرداسنگ، جندبدسترہینگ (ان میں سے کچھ چیزیں بواسیر میں منع ہیں جیسے کہ سرخ مرچ، بینگن، گوبھی اور مصالحے، اگر بواسیر نہیں ہے تو انکے استعمال سے ہو نہیں جاۓ گی)۔ عضلاتی غدی ملینات: رنجدان، انجیر، بسفایؑج، گھیگوار، کشمش۔ مسہلات: اندرایؑن، ایلو۔

  34. اول عضلاتی غدی ملین دیں۔ اسکے بعد درج زیل مفردات میں سے کوؑی ایک آزمایں۔ (1) افیتون فلایؑتی 5 ماشہ، ماءالجین شیربز 7 تولہ جوشاکر شیر خشت انگریزی 2 تولہ حل کر کے پلانا سوداء کا تنقیہ کرتا ہے اور ریاح کو خارج کر کے عضو کو تقویت دیتا ہے۔ (2) مقل ارزق 3 ماشہ یا، صعتر فارسی 7 ماشہ یا، نانخواہ سوختہ 4 ماشہ یا، تخم ہلیون 3 ماشہ یا، برگ سداب 7 ماشہ  کو فرداً فرداً سفوف بنا کر کھانا یا جوشاندے کی مانند پینا عجیب الاثر ہیں۔ (3) ہینگ 4 رتی کو عرق شاہترا 3 تولہ میں حل کر کے پینا ریح البواسیر میں مفید ہے۔ (4) بسفایؑج فستقی 4 ماشہ کا جوشاندہ شریں کر کے پلانا عطیم النفع ہے۔ (5) لسان العصافیر کو باریک پیس کر جنگلی بیر برابر گولیاں بنا کر روزانہ 1 گولی کھانا مفید ہے۔ (6) برگ ککروندہ اور سیاہ مرچ ہموزن چنے برابر گولیاں بنا کر کھانا بھی مفید ہے۔ (7) برگ سروخشک، نانخواہ سوختہ، برگ سداب خشک، تخم ہلیون، ابہل انجدان سوختہ، خردل سفید، جوزبوا سوختہ ہموزن لے کر سفوف بنا لیں۔3 ماشہ روزانہ کھانے کے بعد۔ (8) افیتمون،  دردتج عقربی، بیخ کبر، فلفل گرد، تخم گندنا، صعتر، عاقرقرحا ،مقل ارزق ہر ایک 1 تولہ، مصطگی اور دارچینی 9-9 تولہ، جوکھار 1 ماشہ، پوست ہلیلہ زرد، ہلیلہ سہاہ، تربد سفید ہر ایک 2 تولہ کوٹ پیس کر عرق ککروندہ سبز میں چار پہر کھرل کریں۔ اسی طرح آب گندنا میں چار پہر کھرل کریں۔ چنے برابر گولیاں بنا لیں۔ 1 گولی صبح و شام ہمراہ عرق بادیان کھایں۔ (9) ہلیلہ قابلی 8 ماشہ، ہلیلہ سیاہ ہندی 8 ماشہ، آملہ 1 تولہ کو خیساندے کی طرح پینا مفید ہے۔ (10) کراث یا گندنا 3 ماشہ روزانہ بطور سفوف اور اسکے بیج دھونی کے طور پر مسوں کو خشک کرتے ہیں۔ بارتنگ 6 ماشہ کو خفیف جوش دے کر پینا یا اسکو نچوڑ کر استعمال کرنا فایؑدہ دیتا ہے۔ (11) نرم میٹھی 1 مولی ہمرہ مصری 21 روز تک کھانا بواسیر کو جڑ سے اکھاڑ دیتا ہے۔ (12) برگ آس خشک اور سندرس دھونی کرنے یا آبزن کرنے یا ضماد کرنے میں نافع ہیں۔ (13) گل ارمنی یا چھلکا انار یا بیخ کبر کو پیس کر آبزن کرنا بھی مفید ہے۔ (14) بیخ اکفرس یا بیخ خنظل یا مجیٹھ یا بہروزہ یا بزرالنہج یا بیخ کنیر نبدال یا خارپشت کے پوست زراوند طویل  یا انزردت کی دھونی دینا مفید ہے۔ (مخزن العلاج)

 نوٹ: زیادہ تر نسخہ جات بادی بواسیر کے لیے ہیں۔

جدید تحقیق

 

  • جدید تحقیق کے مطابق لیزر کا طریقہ علاج بہت سہل ہے جس میں نہ تو کوؑی اپریشن ہوتا ہے اور 10 منٹ بعد مریض گھر چلا جاتا ہے۔ دوبارہ ہونے کے چانس بھی نہ ہونے کے برابر ہے۔
  • بیرونی بواسیر زیادہ عام اور تکلیف دہ ہے۔
  • 30 سال کے بعد مقعد کے اعصاب کمزور ہونا شروع ہو جاتے ہیں۔
  • بواسیر کی 4 سٹیج ہوتی ہی۔
  • بعض یوگا کی ورزشیں ہیں جن سے بواسر کو فایؑدہ ہوتا ہے۔ sarvangasana, vipritakarani, halasana ،gomukhasana

دیگر بغیر اپریشن کے طریقے

بواسیر Piles

rubber-band-ligation

بواسیر Piles

sitz bath

بواسیر Piles

Sclerotherapy-vein-treatment

بواسیر Piles

Stapler surgery


ماخوذ

  • حاذق
  • www.avrupacerrahi.com.tr
  • Journal of Family Practice
  • UNESCO
  • گھریلو طبی نسخے از حکیم حافظ طاہر محمود بٹ


Comments are Closed