مستقل انتشار Persistant Arousal Syndrome

مستقل انتشار Persistant Arousal Syndrome یا مستقل ایستادگی میں جنسی خواہش بیدار رہتی ہے۔ یہ کویؑ بیماری نہیں بلکہ نقص ہے جسکا کویؑ نقصان بظاہر نہیں ہے۔ یہ مردوں اور عورتوں دونوں میں پایا جاتا ہے جسکی وجہ سے متاثرہ انسان کو تحریک orgasm ملتی رہتی ہے جس سے وہ مست ہو جاتا ہے۔ اسکا تعلق شہوت (Hypersexuality) سے نہیں ہے۔ بہرحال اس نقص میںجنسی اعضاء میں گھنٹوں بلکہ بعض اوقات دنوں تحریک رہتی ہے۔ اسکی تین قسمیں ہیں۔ پہلی میں خون کا بہاؤ کم ہوتا ہے۔ دوسری میں زیادہ ہوتا ہے اور تیسری میں کم بہاؤ بار بار ہوتا ہے۔ کم دباؤ میں درد بھی ہوتی ہے۔ یہ بہت نایاب بیماری ہے جوکہ 1 لاکھ میں سے صرف 1 فرد کو ہوتی ہے۔

مستقل انتشار Persistant Arousal Syndrom

اسباب

جدید سایؑنس اسکے اسباب پتا نہیں چلا سکی۔ البتہ کہا جاتا ہے کہ سیکل سیل ڈیزیز، نشہ آور ادویات، انٹی ڈپریسنٹ اورخون پتلا کرنے والی ادویات (Anticoagulant) وغیرہ اسکی وجوھات ہیں۔ دیگر اسباب میں عصبی و شریانی نظام میں بگاڑ، ادویات کے ضمنی اثرات

علامات

  • جنسی اعضاء پر کنٹرول نہیں رہتا
  • بغیر جنسی تحریک کے استادگی یا خواہش
  • بے قابو جنسی خواہش
  • شہوت میں غیر ضروری تحریک

 

علاج

ایسے مریضوں کو زیادہ جنسی تسکین کی ضرورت زیادہ ہوتی ہے۔

 

Comments are Closed